آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 23؍ذوالحجہ 1440ھ 25؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پنجاب کے مختلف سرکاری اسپتالوں میں اوپی ڈی پانچویں روز بھی بند ہے جس کی وجہ ینگ ڈاکٹرز کی جانب سے میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ ایکٹ کے خلاف جاری ہڑتال ہے۔

سرکاری اسپتالوں میں ہڑتال کے باعث مریضوں کو چیک اپ کرانے میں مشکلات کا سامنا ہے،پرچی کاؤنٹرز، نرسز اور پیرا میڈیکل اسٹاف بھی احتجاج میں شامل ہے۔

ینگ ڈاکٹرز نے دھمکی دے رکھی ہے کہ جب تک اسپتالوں کی نجکاری کا عمل نہیں رکتا احتجاج جاری رکھیں گے۔

ملتان میں ڈاکٹرز کی جانب سے سول، نشتر، چلڈرن کمپلیکس، شہباز شریف، فاطمہ جناح، کڈنی سینٹر اور انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی کی او پی ڈیز میں ہڑتال جاری ہے۔

فیصل آباد میں بھی ہڑتال سےالائیڈ اور سول سمیت ٹیچنگ اسپتالوں میں او پی ڈیز میں کام بند ہے۔

سرگودھا میں ینگ ڈاکٹرز کہتے ہیں کہ ان کے مطالبات تسلیم نہ کیے گئے تو ایمرجنسی وارڈ بھی بند کر دیں گے۔

صدر پی ایم اے ڈاکٹر سکندر حیات وڑائچ کے مطابق ینگ ڈاکٹرز مذاکرات کے ذریعے اپنے مطالبات تسلیم کروانا چاہتے ہیں۔

ادھر کئی شہروں میں بھی ینگ ڈاکٹرز کی وجہ سے مریض سخت اذیت میں مبتلا ہیں۔

صحت سے مزید