آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 13؍شوال المکرم 1440ھ17؍جون 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ایران سے بڑھتے تناؤ پر سعودی عرب نے خلیجی ممالک کے سربراہان کا ہنگامی اجلاس طلب کرلیا، سعودی عرب نے واضح کیا ہےکہ وہ ایران سے جنگ نہیں چاہتا لیکن اپنا دفاع کرنے کےلیے تیار ہے ۔

سعودی سرکاری خبر ایجنسی کے مطابق سعودی بادشاہ سلمان بن عبدالعزیز نے خلیجی ملکوں اور عرب لیگ کے ارکان کے لیے الگ الگ سربراہی اجلاس 30 مئی کو مکہ میں طلب کیے ہیں، جس میں حالیہ جارحیت اور اس کے نتائج پر تبادلہ خیال کیا جائےگا۔

سعودی وزیر مملکت برائے خارجہ امور عادل الجبیر کا کہنا ہے کہ سعودی عرب جنگ نہیں چاہتا اور اس سے بچنے کے لیے ہر ممکن کوشش کرے گا، لیکن ہمارے حریف نے جنگ کا انتخاب کیا تو مکمل قوت و عزم کے ساتھ اپنا دفاع کریں گے۔

متحدہ عرب امارات کا کہنا ہے کہ خلیجی اور عرب ممالک کا متفقہ لائحہ عمل وقت کا تقاضہ ہے، قطر جسے سعودی دعوت موصول نہیں ہوئی کہتا ہے کہ ایران اور امریکا میں کوئی بھی جنگ نہیں چاہتا، اگر خطے کی بچکانہ حکومتوں کی باتوں میں نہ آیا جائے تو تمام مسائل حل ہوجائیں گے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں