آپ آف لائن ہیں
جمعرات10؍ربیع الثانی 1442ھ26؍نومبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

انبیائے کرام علیہم السلام پر زکوٰۃ واجب نہیں ہوتی

آپ کے مسائل اور اُن کا حل

سوال:۔ میرا سوال یہ ہےکہ نبی کریم ﷺ کی عبادات کے بارے میں ہم سنتے اور پڑھتے رہتے ہیں کہ آپ نماز کیسے ادا فرماتے تھے ،روزہ کیسے رکھتے تھے اور آپ ﷺ نے حج کیسے ادا فرمایا، اعتکاف کتنے دن کا کیا وغیرہ ۔جنگ اورجہاد کے بارے میں بھی آپ علیہ السلام کے اسوۂ حسنہ کا ذکر تفصیل سے ملتا ہے، لیکن جو چیز آج تک نہیں سنی ،وہ یہ ہے کہ آپ ﷺ زکوٰۃ کیسے ادا فرماتے تھے؟براہِ کرم اس بارے میں تفصیل بیان فرمادیں۔

جواب:۔ آنحضرت ﷺ سمیت کسی بھی نبی پر زکوٰۃ فرض نہیں تھی ،کیونکہ زکوٰۃ تو مال کی گندگی دور کرنے کے لیے ہوتی ہے اور انبیائے کرامؑ کا مال گندگیوں اور میل کچیل سے صاف ہوتا ہے۔ انبیائے کرامؑ کے پاس جو کچھ ہوتا ہے، وہ امت اور خلق خدا کا ہوتا ہے اور وہ اسے مناسب مواقع پر خرچ کرتے ہیں۔ عام لوگ تو چالیسواں حصہ دے کر فارغ ہوجاتے ہیں، مگر ان کے پاس جو کچھ ہوتا ہے، وہ سب امت کی نفع رسانی کے لیے ہوتا ہے۔(شامی ۲؍۲۵۶)