آپ آف لائن ہیں
بدھ8؍رمضان المبارک 1442ھ21؍ اپریل 2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

صوفی غلام مصطفےتبسم

سُنو اِک مزے کی کہانی سنو

کہانی ہماری زبانی سنو

ثریا کی گڑیا تھی چھوٹی بہت

نہ دبلی بہت اور نہ موٹی بہت

جو دیکھو تو ننھی سی گڑیا تھی وہ

مگر اِک شرارت کی پڑیا تھی وہ

جو سوتی تو دن رات سوتی تھی وہ

جو روتی تو دن رات روتی تھی وہ

نہ امّی کے ساتھ اور نہ بھیّا کے ساتھ

وہ ہر وقت رہتی ثریّا کے ساتھ

ثریّا نے اِک دن یہ اُس سے کہا

مِری ننھی گڑیا یہاں بیٹھ جا!

بلایا ہے امّی نے آتی ہوں میں

کھٹولی میں تجھ کو سلاتی ہوں میں

وہ نادان گڑیا خفا ہو گئی

وہ روئی وہ چلّائی اور سو گئی

اچانک وہاں اِک پری آگئی

کھُلی آنکھ گڑیا کی گھبرا گئی

تو بولی پری مسکراتی ہوئی

سنہری پروں کو ہلاتی ہوئی

"اِدھر آؤ تم مجھ سے باتیں کرو

میں نازک پری ہوں نہ مجھ سے ڈرو"

وہ گڑیا مگر اور بھی ڈر گئی

لگی چیخنے "ہائے میں مر گئی

مِری پیاری آپا بچا لو مجھے

کسی کوٹھڑی میں چھُپا لو مجھے"

ثریّا نے آ کر اٹھایا اُسے

اٹھا کر گلے سے لگایا اُسے

گلے سے لگاتے ہی چُپ ہو گئی

وہ چُپ ہو گئی اور پھر سو گئی

ثریا کو دیکھا ، پری اڑ گئی

جدھر سے تھی آئی اُدھر مڑ گئی