• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

عمر شریف کا کوئی بدل نہیں، فرض تھا کہ مشکل میں ان کا ساتھ دیں، سردار علی شاہ

صوبائی وزیر ثقافت و تعلیم سید سردار علی شاہ نے کہا ہے کہ عمر شریف روئے زمین پر ایک ہی ہیں، ان کا کوئی نعم البدل نہیں۔

آرٹس کونسل آف پاکستان کراچی نے پاکستان کے معروف و نامور اداکار عمر شریف کے علاج کے حوالے سے ایک پریس کانفرنس کی، جس میں صوبائی وزیر ثقافت و تعلیم سید سردار علی شاہ، ایڈمنسٹریٹر کراچی مرتضیٰ وہاب، صدر آرٹس کونسل محمد احمد شاہ اور عمر شریف کے صاحبزادے جواد عمر نے میڈیا کو بریفنگ دی۔

اس موقع پر صوبائی وزیر ثقافت و تعلیم سید سردار علی شاہ نے کہا کہ عمر شریف روئے زمین پر ایک ہی ہیں ان کا کوئی نعم البدل نہیں، یہ ہمارے فرض میں شامل تھا کہ مشکل کی اس گھڑی میں ان کا ساتھ دیں۔ ان کی صحت کے لیے دعا گو ہوں کہ وہ جلد صحت یاب ہوں اور ایک بار پھر اپنے انداز سے لوگوں کو ہنسائیں۔

واضح رہے کہ عمر شریف کی طبیعت کی ناسازی کی خبر پر ایکشن لیتے ہوئے محکمہ ثقافت سندھ نے عمر شریف کے علاج و معالجے کے لیے 4 کروڑ روپے گرانٹ دینے کا اعلان کیا تھا۔

پریس کانفرنس میں میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے ایڈمنسٹریٹر کراچی مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ عمر شریف اس ملک کا اثاثہ ہیں۔ جیسے ہی ہمیں ان کی علالت کی اطلاع ملی ہمارے ذہن میں یہی بات تھی کہ جس شخص نے ہمیں اتنا ہنسایا خوش رکھا ہم انہیں کیسے اکیلا چھوڑدیں۔ اسی لیے ان کے صاحبزادے جواد عمر کو ہر ممکن مدد کی یقین دہائی کرائی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایئر ایمبولینس تیار ہے ویزا ملتے ہی عمر شریف صاحب امریکہ روانہ ہوجائیں گے۔ ویزا کے حصول کے لیے وزیر اعلیٰ سندھ نے ذاتی طور پر امریکی قونصل خانے سے بات کی ہے جہاں کاغذی کارروائی مکمل ہوچکی ہے۔

مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ ہماری دعا ہے کہ عمر شریف جلد روبہ صحت ہوں اور اسی آرٹس کونسل میں ایک بار پھر پرفارم کریں۔

پریس کانفرنس کی میزبانی کرتے ہوئے صدر آرٹس کونسل محمد احمد شاہ نے کہا کہ سندھ حکومت کا شکریہ ادا کرنا چاہتے ہیں، جنہوں نے فنکار برادری کو بھی اکیلا نہیں چھوڑا، جہاں ہم کچھ چیزوں پر تنقید کرتے ہیں، وہیں اچھے کاموں کی تعریف بھی کرنی چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ ماضی میں فنکار امداد کے منتظر رہتے تھے، اب یہ آوازیں آنا بند ہوگئی ہیں کیونکہ آرٹس کونسل اور سندھ حکومت ہمارے فنکاروں کی داد رسی کے لیے پیش پیش ہے۔ عمر شریف اس ملک کا اثاثہ ہیں اور حکومت سندھ نے ان کے علاج کے لیے جو بیڑا اُٹھایا ہے اس کے لیے ان کے شکرگزار ہیں۔

احمد شاہ نے مزید کہا کہ میں اور عمر شریف کے صاحبزادے جواد عمر سندھ حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہیں، انہوں نے مزید کہا کہ آرٹ اینڈ کلچر کے فروغ اور فنکاروں کی فلاح و بہبود کے لیے سندھ حکومت نے ہمیشہ آرٹس کونسل کے ساتھ تعاون کیا ہے۔ کراچی کے 95 فیصد ادیب، شاعر اور فنکار  ہمیں ووٹ دیتے ہیں کیونکہ وہ آرٹس کونسل پر اعتماد کرتے ہیں۔

پریس کانفرنس میں میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے عمر شریف کے صاحبزادے جواد عمر نے کہا کہ سندھ حکومت کا شکرگزار ہوں کہ اتنی تیزی سے والد کے علاج معالجے کے انتظامات مکمل کروائے، میرے والد کے اندر سے پاکستانیت بولتی ہے انہوں نے ملک کا نام روشن کیا۔ لوگ ان سے بے پناہ محبت کرتے ہیں ہم ان محبتوں کے لیے مشکور ہیں۔

جواد عمر نے مزید کہا کہ میرے والد نے زندگی بھر پوری دنیا کو ہنسایا ہے لیکن ان کی اسپتال میں زیر علاج جس قسم کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہیں یہ ہمارے لیے بہت تکلیف دہ ہیں، میری درخواست ہے کہ خدارا ان کی وہ تصاویر وائرل نہ کریں۔

پریس کانفرنس کے اختتام پر صدر آرٹس کونسل محمد احمد شاہ نے تمام شرکاء سے عمر شریف کی صحتیابی کے لیے دعا کروائی۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید