• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سندھ حکومت نے نیب کی انکوائریوں میں پیش ہونے والے افسران کو تعینات کردیا

کراچی(این این آئی) سندھ ہائیکورٹ کے احکامات ہوا میں اڑا دیئے، نیب اور اینٹی کرپشن کی انکوائریوں میں پیش ہونے والے افسران کو محکموں میں لگا دیا گیا۔سندھ حکومت میں نیب زدہ، پلی بارگین اور ڈبل چارج پر پابندی کے باوجود اکثر محکموں میں خلاف ورزیاں جاری ہیں۔نیب اور اینٹی کرپشن کی انکوائریوں پیش ہونے والے محکمہ جنگلات کے ایس او محمد بخش جوکھیو کو اسسٹنٹ ڈائریکٹر، 6 جون 2014 کو نیب کے ہاتھوں گرفتار 18 گریڈ کے افسر اعجاز پٹھان کو بینظیر بھٹو ہائوسنگ سیل کا ڈائریکٹر بنایا گیا ہے۔ہالا ٹائون کمیٹی کے کلرک قمر بھرٹ کو ایس بی بی ایچ سی کے چیئرمین کا پی ایس بنا کر کو سگنیٹری کا اختیار بھی دیا گیا۔شہید بینظیر بھٹو ہائوسنگ سیل میں کروڑں کی کرپشن کا ٹاسک قمبر بھرٹ اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر محمد بخش جوکھیو کو دیا گیا ہے۔ یہ سیل تین سال میں ایک مکان بھی نہیں بنا سکا۔

اہم خبریں سے مزید