• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی، پولیس اہلکار کے ہاتھوں قتل ہونے والا نوجوان سپردخاک

کراچی کے علاقے اورنگی ٹاؤن میں سادہ لباس پولیس اہل کار کے ہاتھوں قتل 14سال کے لڑکے ارسلان محسود کوسپردِ خاک کردیا گیا۔

فائرنگ میں ملوث سادہ لباس اہل کار نے واقعے کو پولیس مقابلہ ظاہر کرنے کی کوشش کی جسے ساتھی سمیت گرفتارکرلیا گیا۔

سادہ لباس اہل کاروں کیخلاف مقدمے میں قتل، اقدام قتل اور دہشتگردی کی دفعات شامل کی گئی ہیں۔

مقدمے میں سابق ایس ایچ او اعظم گوپانگ، اہلکار توحید اور عمیر نامی شخص کو بھی نامزد کیا گیا ہے۔

دوسری جانب مقتول ارسلان کے چچا بادشاہ خان کا میڈیا سے گفتگو کے دوران کہنا تھا کہ ارسلان ہونہار اور محنتی بچہ تھا، ارسلان دوست کے ساتھ ٹیوشن پڑھ کر آرہا تھا، سادہ لباس اہلکاروں نے ارسلان کے دوست کی ٹانگ پر اورارسلان کو پیٹ پر گولیاں ماریں۔

قومی خبریں سے مزید