آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر2؍ربیع الثانی 1440ھ 10؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

سابق وزیر اعظم نوازشریف اور مریم نوازلندن سے ابوظہبی پہنچ گئے، وہ گزشتہ شام ہیتھرو ایئر پورٹ سے روانہ ہوئے تھے۔


ذرائع کے مطابق سابق وزیر اعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز 7 گھنٹے ابو ظہبی میں قیام کے بعد آج شام لاہور پہنچیں گے۔

ابو ظہبی میں نواز شریف،مریم نواز کی گرفتاری ممکن نہیں

ذرائع کے مطابق نواز شریف اور مریم نواز کی گرفتاری سے متعلق اماراتی حکام کو کوئی درخواست موصول نہیں ہوئی جبکہ ایئرپورٹ حکام کا کہنا ہے کہ کوئی بھی فرد ایئرپورٹ ٹرانزٹ استعمال کرسکتا ہے۔

نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

پاکستانی سفارتی حکام کا کہنا ہے کہ ابو ظہبی میں نواز شریف،مریم نواز کی گرفتاری ممکن نہیں، نیب کی ٹیم کی متحدہ عرب امارات آمد کی کوئی اطلاع نہیں۔کسی ملزم یامجرم کی گرفتاری کے لئےبین الاقوامی ضوابط ملحوظ خاطررکھناہوتےہیں۔

اماراتی قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ نواز شریف،مریم نواز کوابو ظہبی میں گرفتار نہیں کیا جاسکتا،اماراتی قوانین کےمطابق صرف سزایافتہ افراد کی گرفتاری ممکن ہوسکتی ہے۔

نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

لندن میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے میاں نواز شریف کا کہنا تھا کہ نیب عدالت کے فیصلے کے خلاف اپیل دائرکریں گے۔ ان کے خلاف مخالفین کاپراپیگینڈا ناکام ہو گیا، کرپشن کے خلاف الزامات میں انہیں بری کر دیا گیا۔ پہلی مرتبہ جیل نہیں جا رہا،مشرف دورمیں مجھےاٹک قلعےمیں قیدکیاگیاتھا۔

روانگی سے قبل مریم نواز نے ٹوئٹر پر پیغام جاری کرتے ہوئے کہا کہ ’نواز شریف نے اپنا فرض نبھا دیا۔ اب آپ کی باری ہے !‘

انہوں نے نواز شریف کے پیغام کے ساتھ  بھی ایک ویڈیو شیئر کی۔








واضح رہےسابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز ہیتھرو ایئرپورٹ سے پاکستان کیلئے روانہ ہو ئے تھے۔مسلم لیگ نون کے کئی کارکن اور رہنما بھی ان کے ساتھ پاکستان آ رہے ہیں۔

روانگی سے قبل انہوں نے کلثوم نواز سے ملاقات کی جس کی تصویر مریم نواز نے سوشل میڈیا پر شیئر کی۔


‏‏نوازشریف اورمریم نواز کی گرفتاری کی تیاریاں مکمل

دوسری جانب نوازشریف اورمریم نواز کی گرفتاری کے لیے دو ہیلی کاپٹر لاہور ایئرپورٹ پر پہنچا دیے گئے ہیں۔

نیب حکام کے مطابق نیب کی 2 ٹیمیں لاہور ایئرپورٹ اور 2 ٹیمیں اسلام آباد ایئرپورٹ پر تعینات ہوں گی۔ ایئر پورٹ کے ایپرن تک جانے کی اجازت ہو گی۔

ذرائع کے مطابق سول ایوی ایشن نے نیب ٹیموں کو ملک بھر کے ہوائی اڈوں پر جانے کی اجازت دے دی، نیب کی ٹیمیں لاہور اور اسلام آباد ائر پورٹ پر تعینات ہوں گی، نیب کی دونوں ٹیمیں 13 افسران پر مشتمل ہوں گی۔

نوازشریف اور مریم نوازلندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

ذرائع کا کہنا ہے کہ نیواسلام آباد ایئرپورٹ پر غیرمعمولی سکیورٹی انتظامات کیے گئے ہیں۔ سیکورٹی اداروں نے ایئرپورٹ کی سکیورٹی کا ازسرنو جائزہ لیا۔ اور اے ایس ایف اہلکاروں کی تعداد بھی بڑھا دی گئی ہے۔

’نوازشریف اور مریم نواز کو ایئر پورٹ کے اندر سے ہی گرفتار کیا جائے گا‘

نگراں وزیر داخلہ پنجاب  کا کہنا ہے کہ  وفاقی ادارے نوازشریف اور مریم نواز کو ایئر پورٹ کے اندر سے ہی گرفتار کریں گے۔۔ ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر 50 سے 100 افراد کی گرفتاری ہوئی ہے۔ ریلی کے لیے ڈپٹی کمشنر کو درخواست دینی ہوتی ہے ۔ ان کی اطلاع کے مطابق ن لیگ نے ریلی کی اجازت نہیں لی ۔ سیاسی جماعتوں کے ایسے لوگ جو مقدمات میں ملوث ہیں ان کو گرفتار کیا جارہا ہے ۔ الیکشن میں متوقع طور پر گڑ بڑ کرنے والے افراد کو بھی گرفتار کیا جارہا ہے۔

دوسری جانب سابق وزیراعظم نواز شریف کی والدہ شمیم اختر کا کہنا ہے کہ اگر ان کے بچوں کو جیل بھیجا گیا تو وہ بھی ان کے ساتھ جیل جائیں گی۔

'اپنے ویڈیو بیان میں نواز شریف کی والدہ نے کہا کہ پاکستان کا بیٹا ،میرا بیٹا ہے جس نے اسے روشن بنایا، کل وہ واپس آرہا ہے تاکہ میں پھر سے اس کا ماتھا چوم سکوں۔

شمیم اختر نے کہا کہ میرے بیٹے نواز شریف، مریم و صفدر کے خلاف ناحق فیصلہ آیا، میں ان تینوں کو جیل جانے نہیں دوں گی، اگر جیل بھیجا گیا تو میں بھی ان کے ساتھ جاؤں گی۔

سابق وزیراعظم کی والدہ نے کہا کہ ان کا ایمان ہے یہ تینوں بے گناہ ہے اور اللہ تعالیٰ ان کی حفاظت کرے گا، ظالموں کو خدا کے خوف اوراس کی پکڑ سے ڈرنا چاہیے۔

نیب کا ہنگامی اجلاس طلب

چیئرمین نیب نے عدالتی احکامات پر عمل درآمد کرنے کی ہدایات جاری کر دیں۔

ذرائع کے مطابق چیرمین نیب جاوید اقبال نے نیب کا ہنگامی اجلاس آج طلب کر لیا ہے جس میں ایون فیلڈ کیس فیصلے میں عدالتی احکامات کا جائزہ لیا جائےگا۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں نوازشریف اور مریم نواز کی گرفتاری سے متعلق حکمت عملی پرغورکیاجائےگا، چیرمین نیب ذاتی طور پر نوازشریف اور مریم نواز کی گرفتاری کے امور کا جائزہ لیں گے۔

’بچوں کو جیل بھیجا گیا تو ساتھ جاؤں گی‘

سابق وزیراعظم نواز شریف کی والدہ شمیم اختر کا کہنا ہے کہ اگر ان کے بچوں کو جیل بھیجا گیا تو وہ بھی ان کے ساتھ جیل جائیں گی۔

'اپنے ویڈیو بیان میں نواز شریف کی والدہ نے کہا کہ پاکستان کا بیٹا ،میرا بیٹا ہے جس نے اسے روشن بنایا، کل وہ واپس آرہا ہے تاکہ میں پھر سے اس کا ماتھا چوم سکوں۔

نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

شمیم اختر نے کہا کہ میرے بیٹے نواز شریف، مریم و صفدر کے خلاف ناحق فیصلہ آیا، میں ان تینوں کو جیل جانے نہیں دوں گی، اگر جیل بھیجا گیا تو میں بھی ان کے ساتھ جاؤں گی۔

سابق وزیراعظم کی والدہ نے کہا کہ ان کا ایمان ہے یہ تینوں بے گناہ ہے اور اللہ تعالیٰ ان کی حفاظت کرے گا، ظالموں کو خدا کے خوف اوراس کی پکڑ سے ڈرنا چاہیے۔

نواز شریف کی والدہ کا مزید کہنا تھا کہ عدالت نے خود فیصلے میں لکھا کہ کرپشن ثابت نہیں ہوئی تو پھر میرے بچوں کو سزا کس بات کی دی جارہی ہے، صرف ووٹ کو عزت دو کا نعرہ لگانے اور ملک سے وفاداری کی سزا دی جارہی ہے۔

استقبال کے لئے ن لیگ کی حکمت عملی

مسلم لیگ نون نے بھی سابق وزیر اعظم نوازشریف کے استقبال کے لیے حکمت عملی تیار کر لی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ہر ضلع سے مسلم لیگ ن کی ریلی لاہور پہنچے گی اور انتظامیہ کی جانب سے حائل رکاوٹوں کو ہٹا یا جائےگا۔

نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

ذرائع نے مزید بتایا کہ رکاوٹیں ہٹانے کےلیے مسلم لیگ ن کی جانب سے کرینوں کا استعمال کیا جائے گاجبکہ لیگی قیادت کی جانب سے پرامن ریلیوں کو روکنے کی صورت میں کارکنان کو حفاظتی تدابیر اختیار کرنے کی ہدایات بھی دی گئی ہیں۔

مسلم لیگ ن لاہور میں ایئرپورٹ لائونج تک پہنچنے کے لیے 300 رہنمائوں کے نام دے گی، ان رہنمائوں میں ن لیگ کے سابق ارکان پارلیمنٹ اور صوبائی اسمبلی شامل ہوں گے۔

ان پارٹی رہنمائوں کو لائونج تک رسائی دینے پر انتظامیہ کو بھرپور تعاون کی پیشکش کی جائے گی جبکہ پارٹی رہنماؤں کو لائونج تک رسائی نہ دینے پر تمام کارکنان کو لائونج تک لایا جائے گا۔

نواز اور مریم لندن سے ابو ظہبی پہنچ گئے

‏ اسلام آباد ایئرپورٹ پر غیر معمولی سیکورٹی

نواز شریف اور مریم نواز کے طیارے کی اسلام آباد لینڈنگ کی صورت میں نیو اسلام آباد ایئرپورٹ پر غیر معمولی سیکورٹی انتظامات کیے گئے ہیں۔

ایئرلائینز کے آفس سمیت تمام دفاتر کو بند کروا دیا گیا،اسلام آباد انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر اے ایس ایف اہلکاروں کی تعداد میں بھی اضافہ کردیا گیا ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں