آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ12 ربیع الاوّل 1440ھ 21؍نومبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
 
تارکینِ وطن کے روزگار کے لیے کوششیں جاری ہیں
جاپان میں پاکستان کے سفیر ڈاکٹر اسد مجید خان

جاپان میں پاکستان کے سفیر ڈاکٹر اسد مجید خان نے کہا ہے کہ جاپانی حکومت اگلے سات برسوں میں لاکھوں کی تعداد میں غیر ملکی ہنر مند لیبر کو جاپان میں ملازمتیں فراہم کرنے کی منصوبہ بندی کررہی ہے ،ساتھ ہی پاکستانی ہنر مندوں کی جاپان میں ملازمتوں کے لیے بھی کوششیں کررہے ہیں جس میں سب سے اہم جاپانی زبان کی پاکستان میں تعلیم ہے جس کے لیے پاکستانی اور جاپانی حکام سے رابطے میں ہیں روزنامہ جنگ سےگفتگو کرتے ہوئے سفیر پاکستان نے کہا کہ پاکستان سے جاپان کے لیے آموں کی برآمدات شروع ہوچکی ہیں، جس کے اچھے نتائج سامنے آرہے ہیں تاہم جاپانی حکومت سے آموں کی مزید اقسام کی جاپان کو برآمدات کے لیے بات چیت جاری ہے۔ سفیر پاکستان نے کہا کہ دنیا بھر سے کئی لاکھ طالب علم انٹرن شپ پروگرام کے تحت جاپان میں تربیت حاصل کرتے ہیں جو آگے جاکر مستقل ملازمت میں تبدیل ہوجاتی ہے، اس پروگرام سے نیپال، بھارت، سری لنکا، فلپائن اور بنگلا دیش جیسے ممالک بھی فائدہ اٹھارہے ہیں جبکہ ہم بھی جاپانی حکومت سے اس انٹرن شپ پروگرام میں شامل ہونے کے لیے بات چیت کررہے ہیں تاکہ پاکستانی طالب علم بھی جاپان سے اعلی معیار کی تربیت حاصل کرسکیں۔

سفیر پاکستان ڈاکٹر اسد مجید نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ جاپان کے ساتھ تعلیمی سطح پر بھی تعاون میں اضافہ ہو جس کے لیے پاکستان اور جاپان کی یونیورسٹیوں کے درمیان مشترکہ تعلیمی پروگرام کا معاہدہ کرانے پر بھی غور کررہے ہیں جو پاکستانی یونیورسٹی جاپان کے ساتھ اشتراک کرنا چاہتی ہے اسے جاپان میں بھرپور تعاون فراہم کریں گے۔جاپان کے ساتھ معاشی تعلقات کے حوالے سے سفیر پاکستان نے کہا کہ موجودہ سال اپریل میں اسلام آباد میں ہونے والے مذاکرات میں دونوں ممالک کے درمیان معاشی تعلقات سمیت تکنیکی تعاون اور امدادی منصوبوں پر تفصیلی بات چیت ہوئی ہے جس میں مزید پیش رفت متوقع ہے جبکہ پی آئی آئے کے لیے چینی مسافروں کی تعداد میں اضافے اور کوٹہ سسٹم ختم کرنے پر بھی بات چیت ہوئی ہے جس کا جاپانی حکام نے مثبت جواب دیا ہے توقع ہے کہ یہ مسئلہ بھی جلد حل کرلیا جائے گا۔سفارتخانے میں ہونے والی مثبت تبدیلیوں کے حوالے سے سفیر پاکستان نے کہا کہ ایک دہائی قبل نئے سفارتخانے کی تعمیر سے حکومت پاکستان کو ماہانہ لاکھوں ڈالر اور سالانہ کئی ملین ڈالرز کی کرائے کی مد میں بچت ہوئی ہے لہذا سرکاری ملکیت میں سفارتخانے کی تعمیر اور تمام اسٹاف کے لیے اس میں رہائشگاہوں کی تعمیر ایک بہترین فیصلہ تھا جس پر حکومت پاکستان اور جاپان میں پاکستان کے سابق سفیر کامران نیاز مبارکباد کے مستحق ہیں۔

تارکینِ وطن کے روزگار کے لیے کوششیں جاری ہیں
لیجنڈزاینڈ ہیروز آف پاکستان کی تقریب میں شرکت کرنے والے پاکستانی اسٹارز

جاپان کے شہر ناگویا میں پاکستان کے اسپورٹس سپر اسٹارز جہانگیر خان،شاہد آفریدی اور وسیم اکرم کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے پاک جاپان بزنس کونسل کی جانب سے خصوصی تقریب کا اہتمام کیا جارہا ہے یہ تقریب اٹھارہ اگست بروز ہفتہ منعقد کی جائے گی،اس تقریب میں شرکت کے لیے پاکستان کے لیجنڈز کھلاڑی جہانگیر خان، وسیم اکرم اور شاہد آفریدی سترہ اگست کو جاپان پہنچے گے، تقریب میں نہ صرف کھلاڑیوں کو خصوصی ایوارڈز دیئے جائیں گے بلکہ شاہد آفریدی فاونڈیشن اور وسیم اکرم فاونڈیشن کے لیے عطیات بھی جمع کیے جائیں گے، اس حوالے سے پاک جاپان بزنس کونسل کے صدر رانا عابد حسین نے بتایا کہ جاپان میں دس ہزار پاکستانی مقیم ہیں۔

 جن میں سے بڑی تعداد نے معاشی طور پر بڑی کامیابی حاصل کی ہے اور اب وقت ہے کہ ہم اپنے ملک اور اپنے ہیروز کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے جو کچھ کرسکتے ہیں وہ کریں اسی سوچ کے پیش نظر ATRIBUTE TO LEGENDS کے حوالے سے خصوصی تقریب کا انعقاد کیا جارہا ہے تاکہ جاپان میں رہنے والے پاکستانی اپنے ہیروز سے مل سکیں انھیں قریب سے دیکھ سکیں ان کے خیالات جان سکیں اور اپنے ہیروز کے سماجی منصوبوں کے لیے عطیات جمع کرسکیں، رانا عابد حسین نے کہا کہ ہمیں اندازہ ہے کہ اس ایونٹ کا ٹکٹ پچاس ہزار ین یعنی تقریبا پانچ سو ڈالر ہے جبکہ صرف دوسو افراد اس ایونٹ میں شریک ہوسکیں گے تاہم تقریب کے اعلان کے پہلے ہی روز پچاس فیصد ٹکٹ فروخت ہوچکے ہیں جبکہ بقیہ بھی اگلے چند دنوں میں فروخت ہوجائیں گے تاہم مستقبل میں بھی ایسے پروگرام کراتے رہیں گے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں