آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ4؍ربیع الثانی 1440ھ 12؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

وزیراعظم عمران خان نےکراچی کو سیف سٹی بنانے کےلئے ازسرنو منصوبہ تیار کی ہدایت دے دی ہے اور کہا ہے کہ کراچی کا امن ہماری ترجیح ہے۔

اسٹیٹ گیسٹ ہائوس میں وزیراعظم عمران  خان کی زیر صدارت امن و امان سے متعلق اجلاس ہوا ،جس میں گورنر سندھ عمران اسماعیل، وزیراعلیٰ سید مراد علی شاہ ،کور کمانڈر کراچی،چیف سیکریٹری سندھ ، آئی جی سندھ ، ڈی جی رینجرز اور حساس اداروں کے حکام نے شرکت کی ۔

ذرائع کے مطابق امن و امان سے متعلق اجلاس کے دوران ڈی جی رینجرز اور آئی جی سندھ نے وزیراعظم کو بریفنگ دی ۔

ذرائع کے مطابق بریفنگ میں بتایا گیا کہ کراچی میں جاری آپریشن کے نتیجے میں امن وامان کی صورتحال بہت بہتر ہوئی ہے جب کہ کراچی 2013 تک دنیا کا پانچواں خطرناک شہر بن چکا تھا لیکن اب قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارروائیوں سے دنیا کے 50 خطرناک شہروں سے کراچی کا نام نکل گیا ہے۔

بریفنگ میں کہا گیا کہ کراچی میں ملزمان سے برآمد اسلحہ درہ آدم خیل میں تیار کیا جاتا ہے لہذا درہ آدم خیل میں اسلحہ سازی کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی ہونی چاہئے۔

وزیراعظم کوبتایا گیا کہ کراچی میں سی سی ٹی وی کیمروں کے منصوبے کا معاملہ نیب میں زیر تفتیش ہے ،جس پر عمران خان نے کراچی کو سیف سٹی بنانے کےلئے از سر نو منصوبہ تیار کرنے کی ہدایت کی ۔

انہوں نے کہا کہ انٹیلی جنس شیئرنگ میں مزید بہتری سمیت جو مدد چاہیے وہ وفاق فراہم کرے گا، کراچی کا امن ہماری ترجیح ہے اور سیف سٹی منصوبہ کراچی جیسےبڑے شہر کی فوری ضرورت ہے۔

وزیر اعظم عمران خان نے ملک بھر میں جاری شجر کاری مہم کے تحت اسٹیٹ گیسٹ ہاؤس میں پودا بھی لگایا ۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں