آپ آف لائن ہیں
بدھ12؍ صفر المظفّر 1442ھ30؍ستمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

دانت برش نہ کرنےسے کونسی بیماری لاحق ہوسکتی ہے؟

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ روزانہ دانت برش نہ کرنے والے افراد میں منہ اور پیٹ کے کینسر لاحق ہونے کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔

امریکا کی ایک یونیورسٹی میں ہونے والی تحقیق میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ روزانہ دانت برش کرنا انسانی صحت کے لیے اچھا ہےجبکہ وہ لوگ جو دانت برش نہیں کرتے اُن کے لیے کہا گیا ہے کہ وہ کینسر جیسے خطرناک مرض میں مبتلا ہوسکتے ہیں۔

ماہرین کی جانب سے ایک سروے کے بعد یہ کہا گیا ہے کہ جن لوگ نے بیس سال یا اُس سے زائد عرصے تک اپنے دانت صاف نہیں کیے وہ منہ یا پیٹ کے کینسر جیسے موذی مرض میں مبتلا ہوئے۔

ماہرین کے مطابق دانت صاف نہ کرنے کی وجہ سے مسوڑھوں کی بیماری ہوتی ہے جو منہ کے کینسر کے خطرات کو بڑھا دیتے ہے جبکہ پیٹ کا کینسر بھی اسی وجہ سے لاحق ہوتا ہے۔

امریکی یونیورسٹی کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ تحقیق میں شامل ہونے والے 52 فیصد افراد ایسے تھے جن کو مسوڑھوں کی بیماری تھی اور اُن کے کینسر سے متاثر ہونے کے خطرات زیادہ تھے۔

ماہرین نے شہریوں کو مشورہ دیا ہے کہ وہ کم از کم دن میں ایک بار اپنے دانت ضرور صاف کریں۔ ہاوررڈ یونیورسٹی کے پروفیسر کا کہنا ہے کہ مسوڑھوں کی وجہ سے جگر کے کینسر کا خطرہ 52 فیصد تک بڑھ جاتا ہے۔

تحقیقی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ روزانہ دانت برش نہ کرنے کی وجہ سے مسوڑھے خراب ہوتے ہیں اور پھر اس کی وجہ سے صحت خراب ہوتی ہے۔

صحت سے مزید