آپ آف لائن ہیں
جمعرات10؍ربیع الثانی 1442ھ26؍نومبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کامیاب پاور شوز سے حکمرانوں پر لرز ہ طاری ہوگیا، سکندر شیرپائو

پشاور(نمائندہ خصوصی)اے این پی پشاور کے رہنما ملک کامران ظہور، اے این پی کے دس رہنمائوں ملک شیراز خان، حاجی مجید خان، ملک آصفین خان، ملک خداداد خان، فضل حسین، سفیر خان، ملک باسط خان، حاجی چاند گل اور سینکڑوں کارکنوں کے ہمراہ اے این پی سے علیحدگی اختیار کر کے قومی وطن پارٹی میں شامل ہو گئے۔ قومی وطن پارٹی کے صوبائی چیئرمین و سابق صوبائی سینئر وزیر سکندر حیات خان شیرپائو کی طرف سے قومی وطن پارٹی میںشامل ہونے والوں کا خیر مقدم کیا گیا اور انہیں قومی وطن پارٹی کی ٹوپیاں پہنائی گئیں۔ سکندر حیات خان شیرپائو نے قومی وطن پارٹی ضلع پشاور کے چیئرمین ملک سلیم خان کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گوجرانوالہ کراچی اور کوئٹہ میں پی ڈی ایم کے کامیاب پاور شوز سے دھاندلی سے مسلط ہونے والے سلیکٹڈ وزیراعظم پر لرزہ طاری ہو گیا ہے اور بوکھلاہٹ میں اپوزیشن کو دھمکیاں دینا شروع کر دی گئی ہیں۔ سلیکٹڈ وزیراعظم کو عوام کے بڑھتے ہوئے دبائو سے گھبرا کر دھمکیاں دینے کی بجائے اپنی نالائقی نااہلی اور ناکامی کو تسلیم کرتے ہوئے قوم سے معافی مانگ کر مستعفی ہوجانا چاہئے۔ سکندر حیات خان شیرپائو نے کہا کہ 22نومبر کو پشاور میں پی ڈی ایم کے ہونے والیے جلسہ کی کامیابی کے لئے تیاریاں شروع کر دی گئی ہیں۔22نومبر کا جلسہ

حکمرانوں اور مہنگائی کے خلاف ریفرنڈم ہو گا۔ خیبر پختونخوا حکومت کو اسلام آباد سے ریموٹ کنٹرول سے چلایا جا رہا ہے۔ صوبائی حکومت صوبے کے حقوق کے تحفظ میں بری طرح ناکام ہو گئی ہے جس سے عوام میں مایوسی بڑھتی جا رہی ہے۔ سکندر حیات خان شیرپائو نے آٹے چینی بجلی گیس گھی اور دوسری اشیا کے تمام ریکارڈ توڑ دیئے گئے بجلی کی قیمتوں میں دو سال میں دس بار اضافہ کیا گیا ہے جبکہ ادویات کی قیمتوں میں باربار اضافہ کر کے عوام سے زندہ رہنے کا حق بھی چھینا جا رہا ہے۔

پشاور سے مزید