آپ آف لائن ہیں
پیر6؍رمضان المبارک 1442ھ 19؍اپریل2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

نعروں اور دعوئوں سے احساس محرومی ختم نہیں ہوگا‘جمعیت ن

کوئٹہ(آن لائن )جمعیت علماء اسلام نظریاتی پاکستان کے سیکرٹری اطلاعات حاجی عبدالستار چشتی، نائب امیر مولانا محمدحیات ،صوبائی ڈپٹی جنرل سیکرٹری حاجی عبیداللہ حقانی ودیگر نے کہاہے کہ سی پیک سے بلوچستان کی ترقی بلند وبانگ دعوئوں تک محدود رہی اور زیادہ تر منصوبوں کی افادیت سے محروم رکھا گیا۔ سی پیک بالخصوص اسکے مغربی روٹ پر وفاق کی بدنیتی کا تسلسل ختم نہیں ہوا۔ سی پیک سے اس ملک کی تقدیر اس وقت تک بدل نہیں سکتی جب تک ان منصوبوں میں بلوچستان کوشامل نہ کیا جائے۔ سی پیک بلوچستان اور پاکستان کیلئے گیم چینجر کی حیثیت رکھتا ہے مگر افسوس بلوچستان کو ہر دور میں وفاقی حکومتوں کی جانب سے ناانصافیوں کے تسلسل کا سامنا کرنا پڑا اور یہ سلسلہ آج تک جاری ہے ۔انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے احساس محرومی کے خاتمے کے دعوے اور وعدے تو بہت ہوئے لیکن عملی اقدامات آج تک نہیں ہوئے، عوام کو ترقی اور محرومی کے خاتمے کی خوشخبریاں سابقہ حکومتیں بھی سناتی رہیں، بلوچستان 70سال سے بنیادی سہولیات سے محروم ہے ۔ صوبے کے عوام کا احساس محرومی دور کرنے کی بجائے ان میں اضافہ کیاگیا‘ صرف نعروں اور وعدوں سے بلوچستان کا احساس محرومی ختم نہیں ہوگا۔
کوئٹہ سے مزید