کنٹریکٹ پربھر تی فزیوتھراپسٹس کوفارغ کرنے کیلئے رپورٹ طلب
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کنٹریکٹ پربھر تی فزیوتھراپسٹس کوفارغ کرنے کیلئے رپورٹ طلب

لاہور ( جنرل رپورٹر) محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئرپنجاب نے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوار ٹرز ہسپتال اور تحصیل ہیڈ کوارٹر زہسپتال میں 18 ماہ سے تنخواہوں کے بغیر کام کرنے والے 80سے 100کے قریب فزیوتھراپسٹ کونوکریوں سے فارغ کرنے کےلئے تمام چیف ایگزیکٹو ہیلتھ افسروں سے رپورٹ طلب کر لی ہے جس پ فزیو تھراپسٹ نے احتجاج کا اعلان کر تےہوئے حکومت سے مطالبہ کیا ہے فیصلہ واپس لیکر ہائی کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں تمام فزیو تھراپسٹ کو ریگولر کرنےکےلئے کیس پبلک سروس کمیشن کو بھجوایا جائے ۔ فزیوتھراپسٹ کو سابق دورحکومت میں ٹیسٹ انڑویو کے بعدکنٹریکٹ پر بھرتی کیا گیا تھا اور انکے کنٹریکٹ 31اکتوبر 2019ءکو ختم ہو گئے تھے جنہوں نے بعد ازاں ہائی کورٹ سے حکم امتناعی حاصل کر رکھا تھا جس کی مدت 20اپریل کو ختم ہونے پر محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے تمام ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ز سے اس کی رپورٹ طلب کر لی ہے ۔متاثرہ فزیو تھراپسٹ نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ صحت نے لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کو نظر اندازکیا ہے عدالت عالیہ نے محکمہ صحت کو حکم دیا تھا کہ تمام فزیو تھراپسٹ کو 18 ماہ کی تمام بقایا تنخواہوں کی ادائیگی کرکےان کا کیس ریگولرائزیشن ایکٹ 2018 کے تحت پنجاب پبلک سروس کمیشن کو ریگولرائزیشن کے لئے بھیجوایاجائے ۔
لاہور سے مزید