بھارت کورونا کیخلاف ٹھوس اقدامات کرے، ڈبلیو ایچ او
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

بھارت کورونا کیخلاف ٹھوس اقدامات کرے، ڈبلیو ایچ او

عالمی ادارہ صحت نے عالمی وباء کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے بھارت پر مؤثر اور ٹھوس اقدامات پر زور دیا۔

بھارت میں ڈبلیو ایچ او کے نمائندے نے کہا ہے کہ ایسا لگتا ہے کہ فروری میں پابندیاں اٹھانے کے بعد کورونا کو پھیلنے کا موقع دیا گیا۔ احتیا طی تدابیر کو چھوڑ دیا گیا۔

ڈبلیو ایچ او کے نمائندے کا کہنا تھا کہ بھارت میں وبا کا پیمانہ یورپ اور امریکا سے مختلف اور بڑا ہے۔ بھارت میں کورونا پھیلنے کی ایک وجہ گنجان آبادی بھی ہوسکتی ہے۔

دوسری جانب بھارت میں کورونا وائرس کی ایک اور نئی خطرناک قسم کا انکشاف ہوا ہے، جو پہلے سے موجود اقسام سے پندرہ گنا زیادہ طاقتور ہے۔

بھارتی ماہرین کا کہنا ہے کہ کورونا کی نئی قسم سے مریضوں کی حالت تین چار دنوں میں تشویش ناک ہوجاتی ہے، وائرس کی نئی قسم اترپردیش میں کورونا پھیلاؤ کا سبب ہو سکتی ہے۔

واضح رہے کہ بھارت میں کورونا مریضوں کی تعداد 2 کروڑ سے تجاوز کرچکی ہے جبکہ اموات 2 لاکھ 22 ہزار سے زیادہ ہو گئی ہیں۔

بین الاقوامی خبریں سے مزید