• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ہیری اور میگھن کی نومولود بیٹی کے نام کا تنازعہ شدت اختیار کرگیا

لندن(این این آئی)برطانوی شہزادہ ہیری اورمیگھن مارکل کے دوستوں کی جانب سے افواہوں کے طوفان کے بعد شاہی محل بکنگھم پیلس نے رویہ سخت کرلیا ہے۔برطانوی میڈیا کے مطابق ملکہ برطانیہ نے شاہی خاندان کے حوالے سے نہ شکایت، نہ وضاحت کی پالیسی ترک کردی ہے اور اب بکنگھم پیلس کی جانب سے شاہی خاندان سے منسوب جھوٹی باتوں کا کھل کر جواب دیا جائے گا۔خیال رہے کہ گذشتہ برطانوی شہزادہ ہیری اور میگھن مارکل کے ہاں بیٹی کی پیدائش ہوئی ہے جس کا نام انہوں نے للی بیٹ ڈیانا مانٹ بیٹن ونڈسر رکھا ہے۔اس نام میں للی بیٹ ملکہ برطانیہ کی خاندانی عرفیت ہے اور انہیں شاہی خاندان میں اسی نام سے پکارا جاتا ہے تاہم اس نام کے حوالے سے تنازع کھڑا ہوگیا ہے جس میں اب شدت آگئی ہے۔ہیری اور میگھن کے دوستوں نے دعوی کیا تھا کہ للی بیٹ نام ملکہ کی اجازت سے رکھا گیا ہے اور ننھی للی بیٹ کو ویڈیو کال پرملکہ برطانیہ کوبھی دکھایاگیا تھا تاہم بکنگھم پیلس کے ذرائع نے ان دعووں کی تردید کی اور ہیری اور میگھن مارکل نے بھی اس کی سختی سے تردید کی ۔واضح رہے کہ شہزادہ ہیری شاہی ذمہ داریاں چھوڑ چکے ہیں اور اپنی اہلیہ میگھن مارکل کے ساتھ امریکا کی ریاست کیلی فورنیا میں مقیم ہیں۔
یورپ سے سے مزید