• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پی آئی اے، خواتین کو محفوظ سفر کیلئے اقدامات کرنے والی دنیا کی پہلی ایئرلائن قرار


پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز، اقوام متحدہ کی ویمن ایجنسی اور وفاقی محتسب برائے ہراسانی کے مابین معاہدہ کے بعد خواتین کو محفوظ سفر فراہم کرنے کے لیے سرکاری طور پر کیے گئے اقدامات کرنے والی دنیا کی پہلی ایئرلائن قرار دی گئی ہے۔

پی آئی اے ترجمان کے مطابق معاہدے کی رو سے پی آئی اے اپنے دفاتر، ایئرپورٹس اور جہاز میں خواتین کو ہراساں کرنے کی روک تھام کے لیے شعور اجاگر کرے گی۔ ان مقامات پر خواتین کو ہراساں کرنے والوں کے خلاف وفاقی محتسب سے مل کر قانونی چارہ جوئی بھی کی جائے گی۔

سی ای او، پی آئی اے ارشد ملک، اقوامِ متحدہ کی وومین ایجنسی کی سربراہ شرمیلا رسول اور پاکستان میں وفاقی محتسب برائے انسداد ہراسانی کشمالہ طارق نے معاہدے پر دستخط کیے۔

پی آئی اے اپنی پروازوں اور تمام دفاتر میں ہراسانی کو روکنے کے لیے اقوام متحدہ کے پروگرام میں شامل ہوگا۔

ترجمان کے مطابق پی آئی اے دنیا کی پہلی ایئر لائن ہوگی جس میں اقوام متحدہ کے پروگرام کو نافذ کرنے میں اقدامات شروع کیے۔

سی ای او پی آئی اے ایئر مارشل ارشد ملک نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی جانب سے پی آئی اے کا انتخاب پی آئی اے اور پاکستان کے لیے ایک اعزاز ہے۔ بہنوں اور بیٹیوں کی حفاظت اور حسن سلوک سے پیش آنا ہماری مذہبی اور قومی روایت ہے۔

یو این ویمن ایجنسی کی سربراہ شرمیلا رسول نے اس موقع پر کہا ہے کہ کسی بھی ملک کی ترقی میں آمد و رفت اور ٹرانسپورٹ کا نظام اہمیت کا حامل ہے۔ پاکستان جیسے ملک میں نصف آبادی خواتین پر مشتمل ہے۔ خواتین کو محفوظ ٹرانسپورٹ اور ماحول فراہم کرنے سے ملک بہت زیادہ ترقی کرے گا۔ 

وفاقی محتسب کشمالہ طارق کی جانب سے پی آئی اے اور یو این ویمن کو مبارکباد دی گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی محتسب معاشرہ میں ہراسانی کو روکنے اور ہراساں کرنے والے کو منطقی انجام پہنچانے کے لیے سرگرم رہے گا۔

قومی خبریں سے مزید