• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

عبدالرحیم محمد کی چاقو کے وار سے موت کے بعد ساتواں مشتبہ گرفتار

لندن (پی اے) عبدالرحیم محمد کی چاقو کے وار سے موت کے بعد ساتویں مشتبہ کو گرفتارکرلیا گیا۔ ایک چھٹے شخص پر 18 سالہ لڑکے کو چاقو کے وار کرنے کے بعد قتل کے الزام پر چارج عائد کیا گیا تھا۔ عبدالرحیم محمد 8 ستمبر کو ملبورن اسٹریٹ، لیسٹر میں چاقو کے متعدد زخم آنے کے بعد اسپتال میں دم توڑ گیا تھا۔ بیل روڈ کے 25 سالہ ذاکر برانٹ کو جمعہ کے روز گرفتار کرنے کے بعد چارج کیا گیا جسے پیر کو (آج) لیسٹر مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا جائےگا۔ ہفتے کے روز ایک ساتویں شخص کو قتل کے شبہ میں گرفتار کیا گیا۔ اس سے قبل عبدالرحیم کی موت کے سلسلے میں آٹھ افراد پر فرد جرم عائد کی جا چکی ہے۔ نیو وے روڈ کے 27 سالہ محمد اسرافیل گل، کالڈر روڈ کے 29 سالہ ڈینیل پولارڈ، ڈولورٹن روڈ کے 29 سالہ محمد ہنسروڈ، جوپیٹر کلوز کے 58 سالہ عبدالحمید سلیمان، بولنگ گرین اسٹریٹ کے 25 سالہ بھیوک پرمار پر قتل کا الزام لگایا گیا ہے۔ انہیں نومبر میں لیسٹر کراؤن کورٹ میں پیش ہونا ہے۔ اس ہفتے کے شروع میں لیسٹر کے فریڈرک اسٹریٹ کے 25 سالہ فہد علی سلیم پر بھی ایک مجرم کی مدد کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ 32 سالہ محمد فیروز خان اور 57 سالہ خطیب گل، دونوں کو اپولو کورٹ، لیسٹر پر اسی جرم کا سامنا ہے اور وہ اگلے ماہ اسی عدالت میں پیش ہوں گے۔
یورپ سے سے مزید