Advertisement

نئی آوازیں: تُو، اُڑنے کا جب بھی ارادہ کرے گا

October 10, 2018
 

ذوالفقار احسن

تُو، اُڑنے کا جب بھی ارادہ کرے گا

فلک اپنا سینہ، کشادہ کرے گا

ابھی دل کو قابو میں کر لو تو بہتر

یہ مجبور، ورنہ زیادہ کرے گا

سفر کا ارادہ، بدل جائے شاید

رہِ دل وہ جب تک، کشادہ کرے گا

معانی کا اُس میں، سمندر سا ہو گا

بظاہر وہ ہر بات، سادہ کرے گا

میں ڈھل بھی گیا تو یہ مہتاب، احسن

ضیاء سے مری، استفادہ کرے گا


مکمل خبر پڑھیں