آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات 14؍ربیع الثانی 1441ھ 12؍دسمبر 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

سندھ: آسمانی بجلی گرنے سے 24 افراد جاں بحق

سندھ کے شہروں تھر پارکر، جیکب آباد اور گھوٹکی میں آسمانی بجلی گرنے کے واقعات میں 24 افراد جاں بحق ہو گئے۔

سندھ: آسمانی بجلی گرنے سے 24 افراد جاں بحق


تھر میں شدید بارش کے باعث رین ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ہے۔

تھر پارکر کے 9 دیہات میں آسمانی بجلی گرنے کے واقعات میں خواتین سمیت 21 افراد جاں بحق ہوئے ہیں جبکہ درجنوں مویشی بھی ہلاک ہوگئے۔

ڈی سی آفس تھر پارکر میں کنٹرول روم قائم کر کے تمام سرکاری ملازمین کی چھٹیاں منسوخ کر دی گئی ہیں۔

جیکب آباد میں آسمانی بجلی گرنے سے 2 افراد اور گھوٹکی میں ایک شخص جاں بحق ہو گیا۔

دوسری جانب تھر کے صحرا میں بارش اور سرد ہوا چلنے کے بعد سردی نے ڈیرے ڈال دیئے، سرد ہواؤں نے صحرائی علاقوں کے مکینوں کے لیے مشکلات پیدا کر دیں۔

یہ بھی پڑھیئے: مختلف اضلاع میں بجلی گرنے سے 23 افراد جاں بحق

صحرائے تھر میں بھی سردی نے اپنے قدم جما دیئے ہیں، شمال سے چلنے والی ٹھنڈی ہواؤں نے ریت کو کچھ ایسا ٹھنڈا کیا کہ سردی کچھ زیادہ ہی بڑھ گئی اور سردی کی آمد کے ساتھ یہاں کے معمولات بھی بدل گئے ہیں۔

دیہی علاقوں میں مکین صبح اور شام کے اوقات میں گرم کپڑوں میں لپٹے دکھائی دیتے ہیں جبکہ کھلے علاقوں میں آگ کی حدت ان کے لیے سردی کی شدت کو کم کرنے کا بہترین ذریعہ ہے۔

5 سال کی طویل اور شدید قحط سالی کے بعد تھر کے علاقہ مکینوں کے لیے اچانک پڑنے والی سردی پریشانی کا سبب بن گئی ہے۔

قومی خبریں سے مزید