آپ آف لائن ہیں
اتوار4؍شعبان المعظم 1441ھ 29؍مارچ 2020ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

فروغ نسیم پاکستان بار کونسل کی رکنیت سے مستعفی

سابق وزیرِ قانون بیرسٹر فروغ نسیم نے پاکستان بار کونسل کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا۔

سابق وزیرِ قانون فروغ نسیم نے پاکستان بار کونسل میں اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے، ان کے استعفے سے پاکستان بار کونسل سندھ کی ایک نشست خالی ہوگئی۔

بیرسٹر فروغ نسیم کی جانب سے خالی کی گئی نشست پر یاسین آزاد ایڈووکیٹ کا تقرر کر دیا گیا ہے۔


اٹارنی جنرل پاکستان انور منصور خان نے فروغ نسیم کے استعفے اور یاسین آزاد کی تقرری کے نوٹی فکیشن جاری کر دیئے۔

واضح رہے کہ آج صبح ہی آرمی چیف کے مدتِ ملازمت میں توسیع کیس میں وکیل بیرسٹر فروغ نسیم کا لائسنس بحال کیا گیا تھا۔

فروغ نسیم نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی پیروی کرنے کے لیے 26 نومبر کو وفاقی وزیرِ قانون کے عہدے سے استعفیٰ دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیئے: وفاقی وزیر قانون فروغ نسیم مستعفی

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے فروغ نسیم کا استعفیٰ اگلے دن منظور کر لیا تھا۔

صدر مملکت کی جانب سے وزیرِ قانون کا استعفیٰ منظور ہونے کے بعد وزیرِ اعظم عمران خان کی کابینہ کا حجم کم ہوگیا اور اب اس میں 48 ارکان رہ گئے ہیں۔

پی ٹی آئی حکومت میں وفاقی وزراء 25 سے کم ہوکر 24 رہ گئے، مجموعی طور پر کابینہ میں وزرائے مملکت 4، مشیر 5 اور معاونین خصوصی کی تعداد 15 ہے۔

قومی خبریں سے مزید