آپ آف لائن ہیں
اتوار13؍ذیقعد 1441ھ 5؍جولائی 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

انٹر نیٹ کی رفتار کو مزید بڑھانے کے لیے وائی فائی کو اپ گریڈ کیا جا رہا ہے، جس کے بعد صارفین بغیر کسی رکاوٹ کے تیز ترین انٹر نیٹ استعمال کر سکیں گے ۔ فیڈرل کمیونی کیشنز کمیشن نے وائی فائی کے نئے بینڈ 6GHz اسپیکٹرم کا ایک پلاٹ کھولنے کے حق میں ووٹ دے دیا ہے جو صارفین کے روٹرز کو 2.4GHz اور 5GHz بینڈ پر نشر کرنے کے قابل بنا دے گا۔یا اسپیکٹرم راؤٹرز اور دیگر آلات کے لئے پیش کردہ جگہ کی مقدار کو چار گنا بڑھاتا ہے، جس کا مطلب ہے کہ زیادہ بینڈوتھ دستیاب ہے اور وہ بھی کسی مداخلت کے بغیر۔ 

اُمید کی جارہی ہے کہ رواں برس کے آخر تک وائی فائی 6GHzمارکیٹ میں "Wi-Fi 6E"کے نام سے موجود ہوگا ۔ مارکیٹنگ لیڈر کیون رابنسن کا کہنا ہے کہ نئے بینڈ اسپکٹرم کے آنے سے جدید ترین آلات پر تیز تر اور قابل اعتماد کنکشن کی توقع کی جاسکتی ہے۔ 20 برسوں کے بعد وائی فائی اسپیکٹرم کے حوالے سے یہ سب سے اہم فیصلہ ہے ۔فی الحال دو بینڈز 4GHz .2اور 5GHz موجود ہیں اور 1989ء کے بعد پہلی مرتبہ تیسرے بینڈ 6GHz کی اجازت دی گئی ہے ۔

سائنس اینڈ ٹیکنالوجی سے مزید
ٹیکنالوجی سے مزید