آپ آف لائن ہیں
پیر7؍ ربیع الثانی1442ھ 23؍ نومبر2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

دنیا کی بڑی کمپنیاں کونسی ہیں؟ نئی رپورٹ سامنے آگئی

عالمگیر وبا کورونا وائرس نے سال 2020 میں بڑی بڑی کمپنیوں کو کافی نقصان پہنچایا جہاں نہ صرف ان کی کارکردگی متاثر ہوئی بلکہ اس کی برینڈ ویلیو بھی نیچے آگئی۔

ایسے میں عالمی سطح پر کام کرنے والی بڑی ٹیکنالوجیکل کمپنیوں کے کام پر یہ کورونا وائرس اثر انداز نہیں ہوسکا، اور دلچسپ بات یہ ہے کہ ان کمپنیوں کی برینڈ ویلیو میں ہوشربا اضافہ ہوا ہے۔

انٹربرینڈ کی سالانہ بیسٹ گلوبل برانڈ کی رپورٹ منظر عام پر آئی ہے جس میں ٹیکنالوجی سیکٹر سے تعلق رکھنے والی کمپنیوں کی کارکردگی نمایاں ہے۔

رپورٹ کو کمپنی کی عالمی سطح پر کام کرنے، عالمگیر وبا کوویڈ-19 کے دوران معاشی بحران سے نمٹنے، کمپنی کی انفرادی کارکردگی اور اپنے صارفین کے مستقبل کے لیے مزید بہتر اقدامات کرنے جیسے عوامل پر مرتب کیا گیا ہے۔

مذکورہ فہرست میں انٹربرینڈ کی جانب سے 100 سے زائد کمپنیوں کی برینڈ ویلیو کا تخمینہ لگایا ہے، تاہم یہاں سرفہرست 11 کمپنیوں کا ذکر کیا جارہا ہے۔


11. انسٹاگرام


فیس بک کی ملکیت میں آنے والی کمپنی انسٹاگرام کی برینڈ ویلیو میں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

ایک اندازے کے مطابق اس کمپنی کو یومیہ 50 کروڑ لوگ سے زیادہ لوگ اوسطاً استعمال کرتے ہیں۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 26 ہزار 60 ملین ڈالر (تقریباً 41 کھرب 83 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


10. سیپ


یورپ کی معروف سافٹ ویئر کمپنی دنیا کی تیسری بڑی پبلک ٹریڈڈ سافٹ ویئر کمپنی ہے۔

امریکا سے باہر یہ اپنی آمدن کے اعتبار سے دنیا کی سب سے بڑی کمپنی ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 28 ہزار 11 ملین ڈالر (44 کھرب 97 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


9. سِسکو


امریکی ملٹی نیشنل کمپنی سِسکو نے اس فہرست میں 9ویں نمبر پر اپنی جگہ بنائی ہے۔

رواں برس فورچون میگزین کی رپورٹ کے مطابق یہ کمپنی کام کرنے کے اعتبار سے دنیا کی چوتھی بہترین کمپنی ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 34 ہزار 119 ملین ڈالر (54 کھرب 77 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


8. آئی بی ایم


بیسویں صدی کے ابتدا میں قائم ہونے والی کمپنی انٹرنیشنل بزنس مشین (آئی بی ایم) عالمی سطح پر اپنی الگ پہچان رکھتی ہے۔

دنیا کے 170 ممالک میں ساڑھے 3 لاکھ سے بھی زائد کے ساتھ کمپنی دنیا میں سب سے زیادہ ملازمین رکھنے والی کمپنیوں میں سے ایک ہیں۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 34 ہزار 885 ملین ڈالر (56 کھرب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


7. فیس بک


فیس بک بلا شبہ دنیا کا معروف ترین برینڈ ہے جسے دنیا میں اسمارٹ فون رکھنے والا ہر شخص ہی جانتا ہے۔

اس سوشل پلیٹ فارم پر ماہانہ کی بنیاد پر 2 ارب 70 کروڑ سے زائد افراد ایکٹو ہوتے ہیں۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 35 ہزار 187 ملین ڈالر (56 کھرب 49 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


6. اِن ٹیل


کمپیوٹر کو پڑھنے والے لفظ ’پروسیسر‘ سے آشنا ہوتے ہیں، اور اس پروسیسر چپ کو بنانے والی دنیا کی سب سے بڑی کمپنی ان ٹیل ہی ہے۔

ان ٹیل آج سے دو سال قبل تک امریکا کی 40ویں بڑی کمپنیوں میں سے ایک تھی، تاہم آج یہ انٹربرینڈ کی دنیا کی چھٹی بڑی کمپنی بن چکی ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 36 ہزار 971 ملین ڈالر (59 کھرب 35 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


5. سامسنگ


سامسنگ نے اپنی برینڈ ویلیو کو عالمی سطح پر برقرار رکھنے کی کوشش کی ہے جس کا ثبوت انٹربرینڈ میں اس کا پانچویں نمبر پر ہونا ہے۔

الیکٹرونکس انڈسٹری میں اپنی ایک پہچان رکھنے والی سامسنگ کمپنی 2017 میں اپنی آمدن کے اعتبار سے دنیا کی سب سے بڑی الیکٹرونکس کمپنی تھی۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 62 ہزار 289 ملین ڈالر (100 کھرب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


4. گوگل


گوگل ایک ایسا نام ہے جو معلومات رسانی کے لیے اس وقت دنیا کا بے تاج بادشاہ ہے، لیکن اپنی برینڈ ویلیو کے اعتبار سے انٹربرینڈ کی فہرست میں اس کا چوتھا نمبر ہے۔

سرچ انجن، کلاؤڈ کمپیوٹنگ، آن لائن ایڈورٹائزنگ ٹیکنالوجی فراہم کرنے والی یہ کمپنی ایلفابیٹ انکارپوریشن کی چائلڈ کمپنی ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت ایک لاکھ 65 ہزار 444 ملین ڈالر (265 کھرب 62 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


3. مائیکروسافٹ


طویل عرصے تک دنیا کے امیر ترین آدمی رہنے والے بل گیٹس کی کمپنی مائیکرو سافٹ برینڈ ویلیو کے اعتبار سے تیسرے نمبر پر ہے۔

مائیکروسافٹ دنیا کے معروف اور سب سے زیادہ استعمال ہونے والے آپریٹنگ سسٹم ’ونڈوز‘ کو بنانے والی کمپنی ہے اور یہ آپریٹنگ سسٹم گھر سے لے کر بڑی بڑی کمپنیوں میں استعمال ہوتا ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت ایک لاکھ 66 ہزار ایک ملین ڈالر (266 کھرب 51 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


2. ایمازون


کورونا وائرس نے ایمازون کو سب سے زیادہ فائدہ پہنچایا اور لاک ڈاؤن کے باعث گھر تک محدود رہنے والوں نے اس کی سروسز سے کافی فائدہ اٹھایا۔

اس وقت ایمازون دنیا کی سب سے بڑی آن لائن مارکیٹ پلیس ہونے کے ساتھ ساتھ دنیا کی سب سے بڑی کمپنی بھی ہے۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 2 لاکھ 667 ملین ڈالر (322 کھرب 17 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔


1. ایپل


ایپل بلاشبہ برینڈ ویلیو میں اپنا ثانی نہیں رکھتا اور دوسرے نمبر پر موجود ایمازون سے بھی بہت آگے ہے۔

مائیکرو سافٹ کی طرح ایپل بھی کمپیوٹر سروسز، سافٹ ویئر اور ہارڈ ویئر فراہم کرتی ہے جبکہ اس کے علاوہ اس کی دیگر نامور پروڈکٹس میں آئی فون، آئی بیڈ، آئی پوڈ وغیرہ شامل ہیں۔

انٹربرینڈ کے تخمینے کے مطابق کمپنی کی برینڈ ویلیو اس وقت 3 لاکھ 22 ہزار 999 ملین ڈالر (518 کھرب 57 ارب پاکستانی روپے) سے زائد بنتی ہے۔

اس کے علاوہ بھی انٹربرینڈ نے اپنی فہرست میں کمپنیوں کو جگہ دی ہے جن میں ایڈوبی، یوٹیوب، ٹیسلا، ویزا، ای بے، فلپس، ماسٹر کارڈ، سیلزفورس، پے پال، سمنز، ایچ پی، کینن، نائین ٹینڈو، ہوواوے، پیناسونک، لنکڈان، اوبر اور حیرت انگیز طور پر کانفرنس ویڈیو سافٹ ویئر زوم بنانے والی کمپنی زوم بھی شامل ہے۔

خاص رپورٹ سے مزید