آپ آف لائن ہیں
بدھ یکم رمضان المبارک 1442ھ14؍اپریل2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

مہنگائی کا تسلسل جاری، 25 اشیاء ضروریہ کی قیمتیں بڑھ گئیں، ادارہ شماریات


مہنگائی میں اضافے کا یہ مسلسل چھٹا ہفتہ ہے، حالیہ ہفتے مہنگائی کی شرح میں 2 اعشاریہ 41 فی صد ریکارڈ اضافہ ہوا۔ ادارہ شماریات نے ہفتہ وار مہنگائی پر رپورٹ جاری کر دی۔

ادارہ شماریات کے مطابق گھی، آٹا، چینی، دالیں، چاول، چکن، گوشت، صابن، دودھ سمیت 25 اشیاء ضروریہ کی قیمتیں بڑھ گئیں۔ مہنگائی میں اضافے کا سبب اشیاء ضروریہ کی قیمتیں بڑھنا ہے۔ 

ایک ہفتے میں چکن 5 روپے 25 پیسے مہنگا ہو گیا۔ جبکہ اوسط قیمت 250 روپے 28 پیسے فی کلو ہو گئی۔ چنے کی دال کی قیمت میں 3 روپے 62 پیسے فی کلو اضافہ ہوا، اوسط قیمت 192 روپے 80 پیسے ہو گئی۔ چینی کی اوسط قیمت 8 پیسے بڑھ کر 94 روپےفی کلو ہو گئی۔

 رپورٹ کے مطابق حالیہ ہفتے میں مونگ کی دال 78 پیسے اور مسور کی دال 12 پیسے فی کلو مہنگی ہوئی۔


جبکہ آٹے کا 20 کلو کا تھیلا 5 روپے 13 پیسے مہنگا ہوا، انڈے کی فی درجن قیمت ایک روپے تک بڑھی ہے۔ سرسوں کا تیل 3روپے77 پیسے مہنگا ہوا ہے۔ گوشت، آلو، لہسن، خشک دودھ اور صابن کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوا ہے۔

ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے کے دوران 5 اشیاء کی قیمتوں میں کمی ہوئی ہے، ٹماٹر 2 روپے، پیاز 91 پیسے فی کلو اور ایل پی جی کا گھریلو سلنڈر 30 روپے 41 پیسے سستا ہوا۔ جبکہ ایک ہفتے کے دوران 21 اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

تجارتی خبریں سے مزید