مذہبی جماعت کا احتجاج، مری سے اسلام آباد جانے والی سڑک پر ٹریفک بحال
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

مذہبی جماعت کا احتجاج، مری سے اسلام آباد جانے والی سڑک پر ٹریفک بحال

پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد میں مذہبی جماعت کا احتجاج جاری ہے جبکہ بارہ کہو کے علاقے اٹھال چوک میں دھرنے کے باعث بارہ کہو سے مری جانے والی ٹریفک کے لیے بند سڑک پر ٹریفک بحال کر دی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق بارہ کہو، فیض آباد انٹر چینج اور گرد و نواح میں موبائل سروس بھی معطل کر دی گئی ہے جبکہ فیض آباد انٹرچینج پر رینجرز، ایف سی اور پولیس کی بھاری نفری تعینات ہے۔


دوسری  جانب احتجاج کے پیش نظر فیض آباد اور اطراف میں موبائل انٹرنیٹ سروس معطل ہونے کے نتیجے میں صارفین کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، آن لائن کلاسز لینے والے طلبا و طالبات، اساتذہ، امتحانات دینے اور کلاس لینے والے طلبہ کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

دوسری جانب اسلام آباد میں ٹریفک کی خراب صورتحال کے سبب  اسلام آباد ٹریفک پولیس کی جانب سے  ڈھوکری چوک، بھارہ کہو، کشمیر چوک، ترنول،  روات ٹی کراس، فیض آباد اور آئی جے پی روڈ کے لیے متبادل ٹریفک پلان جاری کیا گیا تھا۔

اسلام آباد ٹریفک پولیس کی جانب سے جاری کیے گئے متبادل پلان میں کہا گیا ہے کہ مری سے اسلام آباد کے لیے شاہ پور ویلیج سے سملی ڈیم روڈ، پھر پرنس روڈ استعمال کریں، مری جانے والے مسافر حضرت پارک روڈ سے بنی گالہ کا راستہ اپنائیں۔

ٹریفک پولیس کے مطابق روات ٹی کراس جانے کے لیے پشاور روڈ استعمال کریں جبکہ ترنول جانے کے لیے موٹروے اور  آئی جے پی جانے کے لیے نائنتھ ایونیو کا استعمال کریں۔

ٹریفک پولیس اسلام آباد کا کہنا ہے کہ راول ڈیم روڈ، ترامڑی چوک، فیصل ایونیو،ایکسپریس وے، مارگلہ روڈ، جناح ایونیو، سرینگر ہائی وے، اتاترک ایونیو، کانسٹیٹیوشن ایونیو، الیونتھ، ٹینتھ، نائینتھ اور سیون ایونیو پر بھی ٹریفک معمول کے مطابق رواں دواں ہے۔

قومی خبریں سے مزید