• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ڈائریکٹر سے شادی کی چھٹی مانگنے پر وہ ناراض ہوگئے تھے، اداکار شریاز تلپاڈے

بالی ووڈ اداکار شریاز تلپاڈے نے کہا ہے کہ جب ان کے فلم ڈائریکٹر ناگیش کوکونور کو یہ پتہ چلا کہ وہ شادی کرنے والے ہیں تو وہ غصے میں آگئے، اور چھٹی دینے سے انکار کردیا۔ 

یاد رہے کہ  ڈائریکٹر ناگیش کوکونور اور اداکار شریاز تلپاڈے، نیشنل ایوارڈ یافتہ فلم ’اقبال‘ کی تیاری میں اکٹھے تھے۔ 

شریاز تلپاڈے نے ایک بھارتی میڈیا ادارے سے گفتگو کے دوران اس حوالے سے پیش آنے والا واقعہ بتاتے ہوئے کہا کہ انھیں اس فلم کے لیے تین دنوں میں کام شروع کرنا تھا۔

تو اس موقع پر انھوں نے ڈائریکٹر سے 31 دسمبر کی چھٹی کے لیے کہا، ڈائریکٹر ناگیش یہ سن کر سمجھے کہ شریاز کوئی پارٹی کرنا چاہتے ہیں، لیکن جب شریاز نے انھیں بتایا کہ وہ اس روز پارٹی نہیں شادی کرنا چاہتے ہیں تو ناگیش نے غصے میں ان سے کہا کہ وہ شادی منسوخ کردیں۔

شریاز کے مطابق وہ مڈل کلاس خاندان سے تعلق رکھتے ہیں اور ان کی شادی کا کارڈ بھی پرنٹ ہوچکا تھا، ایسے میں لوگوں سے یہ کہنا کہ شادی منسوخ ہوگئی ہے، کیسے ہوسکتا تھا؟

جس کے بعد انھوں نے فلم ڈائریکٹر کو بڑی مشکل سے منایا اور کہا کہ میں شوٹنگ منسوخ نہیں کرونگا اور صرف ایک دن کا آف دیدیں۔ 

انھوں نے کہا کہ اس موقع پر ناگیش نے شادی منسوخ کرنے کے حوالے سے اپنے غصے کی وجہ یہ بتائی کہ فلم اقبال میں شریاز کو ایک ٹین ایجر کا کردار ادا کرنا ہے اور حقیقی زندگی میں اتنے کم عمر لڑکے کی شادی نہیں ہوتی۔ 


شریاز کے مطابق انھوں نے فلم کی پبلسٹی کے موقع پر کبھی ان سے اس موضوع پر بات نہیں کی تھی اور جب میری بیوی دپتی نے کہا کہ وہ فلم کی مہورت میں شریک ہونا چاہتی ہیں تو وہ ناگیش کی بہن کی حیثیت سے وہاں آئیں۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید