• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

دن بہتر بنانے کیلئے صبح کا آغاز کیسے کیا جائے؟

صبح اُٹھتے ہی مثبت عادات کے ساتھ اگر دن کا آغاز کیا جائے تو سارا دن بہتر اور چاق و چوبند گزر سکتا ہے جبکہ چند افراد صبح کے اوقات میں چند منفی عادات کے عادی ہوتے ہیں جن کے نتیجے میں اُن کا سارا دن دوسروں کی نسبت تھکا ہوا گزرتا ہے جس کی وجوہات اُنہیں خود بھی معلوم نہیں ہوتیں، صبح کا بہتر آغاز ہی دن اچھا گزارنے کا تعین کرتا ہے۔

طبی و فٹنس ماہرین  کی جانب سے صبح کا آغاز بہتر اور سارا دن اچھا بنانے کے لیے کچھ مثبت عادات تجویز کی جاتی ہیں جبکہ اُن کا کہنا ہے کہ اگر آہستہ آہستہ خود میں تبدیلی لا کر منفی عادات کو چھوڑ دیا جائے تو سارا دن بہتر اور ہشاش بشاش گزارا جا سکتا ہے ۔

ماہرین فٹنس اور طبی ماہرین کی جانب سے صبح کے اوقات میں اپنائی جانے والی منفی عادات کو انسان اور اس کی صحت کا دشمن قرار دیا جاتا ہے جن سے چھٹکارہ حاصل کرنا آسان بھی ہے اور ناگزیر بھی۔

مضر صحت ناشتہ

غذائی ماہرین کی جانب سے تجویز کیا جاتا ہے صبح کی پہلی غذا یعنی کے ناشتہ ایک مکمل غذا ہونی چاہیے جس میں کاربز، پروٹین اور فائبر موجود ہو، ناشتے میں مسالے دار غذائیں نہ کھائیں۔

اس دوران کسی بھی کیفین والا مشروب یعنی چائے یا کافی پر انحصار نہیں کرنا چاہیے، یہ مشروبات فوراً جگا تو دیتے ہیں مگر ان کا صحت پر براہ راست منفی اثر مرتب ہوتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ میٹھے اور کیفین والے مشروب پینے کی صورت میں نوجوانوں میں بھی ذیابطیس کی شکایت تیزی سے بڑھ رہی ہے۔

اگر صبح کے اوقات میں اُٹھتے ہی ناشتہ کرنے کے عادی نہیں ہیں یا یہ پسند نہیں کرتے تو رات ہی میں کسی پھل کا فرحت بخش جوس تیار کرکے فریج میں رکھ دیں تاکہ صبح سب سے پہلے جوس ہی پئیں، یہ مشروب کھجور، کیلے، سیب یا مکس فروٹ کا جوس یا ملک شیک ہو سکتا ہے۔

جلدی آفس پہنچنے کے لیے صفائی نظر انداز کرنا

صبح الارم بجنے پر اسے آگے بڑھانا یا اسے بند کر کے دوبارہ سو جانا کوئی عقلمندانہ فعل نہیں ہے، ایسا کرنے سے ناشتے، تیار ہونے کا اور اپنی صاف ستھرائی کا وقت آپ خود اپنے ہاتھوں سے گنوا دیتے ہیں اور پھر تاخیر سے اُٹھ کر کچھ بھی کھا پی کر آفس پہنچ جاتے ہیں۔

ماہرین کے مطابق ایسا کرنے سے آپ خود ہی اپنے لیے منفی سوچنے لگتے ہیں، صاف ستھرائی اور اچھا لباس نہ پہننے کی وجہ سے آپ دوسروں کو دیکھ کر سارا دن خود کو ملامت کرتے رہتے ہیں اور اس عادت کے نتیجے میں سارا دن ضائع اور بے کار چلا جاتا ہے۔

طبی ماہرین کے مطابق صبح سویرے نہانا بے حد ضروری ہے خصوصاً اُن کے لیے جو افراد گھر سے باہر جاتے ہیں، صبح کے اوقات میں ناشتے اور دفتر جانے سے قبل نہائیں  اور ساتھ میں اپنے ناخنوں اور دانتوں کی اچھی طرح سے صفائی لازمی کریں، اچھے لباس کا انتخاب کریں، اس عادت سے آپ خود کو پر اعتماد اور با وقار محسوس کریں گے اور دن مثبت اور بہتر گزرے گا۔

دن بھر کے کاموں کی فہرست تیار کریں

صبح اُٹھتے ہی اپنے دن بھر کے کاموں کی فہر ست اپنے دماغ میں تیار کر لیں، آرام و سکون سے سوچیں کہ آج کے اہم ٹاسک کیا ہیں جنہیں پورا کرنا لازمی ہے، اسی طرح رات سونے سے 10 منٹ قبل گزرے ہوئے دن کا احتساب کریں کہ آج کا دن کیسا رہا، کیا اچھا اور برا تھا اور کل یا آئندہ آنے والے دنوں میں کیا غلطی نہیں دہرانی ہے۔

صبح اٹھتے ہی موبائل فون کا استعمال مضر صحت ہے

صبح اٹھتے ہی اپنے موبائل پر نیوز فیڈ یا اپنے سوشل میڈیا پیجز کا جائزہ نہ لیں کیوں کہ بیدار ہونے کے فوراً بعد ہی موبائل فون کا استعمال انسانی دماغ، آنکھوں کی صحت کے لیے  بالکل بھی درست نہیں ہے۔

ورزش کریں

کوشش کریں کے دن کا آغاز کسی اچھی اور صحت مند ورزش سے کریں یا پھر کم از کم 30 منٹ چہل قدمی کریں، اس دوران ساتھ میں پسندیدہ میوزک بھی سنا جا سکتا ہے۔


صحت سے مزید