• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

دنیا بھر میں ریئل اسٹیٹ کو ایک کامیاب شعبہ کے طور پر سمجھا جاتا ہے اور سرمایہ کاری کی اہمیت سے واقف ہر شخص اپنی سرمایہ کاری کا ایک حصہ ریئل اسٹیٹ میں ضرور لگاتا ہے۔ اگر شعبہ تعمیرات کی بات کریں تو تعمیرات کی صنعت میں کام کرنا اور کامیابی حاصل کرنا آسان نہیں۔ اس کے لیے آپ کے پاس علم اور تجربے کا ہونا ضروری ہے، جس میں برسوں کی تربیت اور علمی تجربہ شامل ہے۔ 

تاہم، اب تعمیرسازی کی صنعت ایک تبدیلی کے عمل سے گزر رہی ہے۔ وہ لوگ جنھوں نے زندگی میں ایک ہتھوڑا تک نہیں اُٹھایا اور نا ہی کبھی ان کا کسی تعمیراتی سائٹ پرجانے کا اتفاق ہوا ہے، وہ بھی اس صنعت میں اپنے لیے جگہ بنانے میں کامیاب ہورہے ہیں۔

ہرچندکہ، یہ ممکن ہے تعمیرات کی صنعت میں کوئی تجربہ نہ رکھنے کے باوجود آپ ایک کامیاب ’کنسٹرکشن انٹرپرینیور‘ بن جائیں۔ تاہم اس کے لیے کم از کم آپ میں ایک خصوصیت کا ہونا ضروری ہے: ’’آپ ایک انٹرپرینیور کا دماغ رکھتے ہوں‘‘۔ جی ہاں، اتنی سادہ سی بات ہے۔

اگر آپ میں ’کنسٹرکشن انٹرپرینیور‘ بننے والی خصوصیات پائی جاتی ہیں تو آپ تعمیراتی شعبہ میں اپنا نام کما سکتے ہیں۔ تعمیرات کی صنعت ہر وقت ’’کام جاری ہے‘‘ کے مترادف ہے اور گزرتے وقت کے ساتھ بہ طور انٹرپرینیور آپ بہتر سے بہتر ہوتے جاتے ہیں، تاہم ذیل میں بیان کردہ پانچ ایسی خصوصیات ہیں، جنھیں اپنا کر آپ ایک کامیاب ’کنسٹرکشن انٹرپرینیور‘ بن سکتے ہیں۔

عملی قدم اٹھائیں

کئی لوگوں کے پاس کام کا ایک بہترین آئیڈیا موجود ہوتا ہے، تاہم وہ اس پر عمل درآمد کرنے سے خوفزدہ رہتے ہیں۔ ایک کامیاب نتیجہ، ایک زبردست آئیڈیا کا ہی اختتام ہوتا ہے، تاہم اس کامیابی کا 99فی صد دارومدار اس بات پر ہوتا ہے کہ آپ اس پر کس طرح عمل درآمد کرتے اور اسے کس طرح آگے لے کر چلتے ہیں۔ صرف کاغذ پر اپنے خیال کو بہتر سے بہتر کرنے میں ہی نہ پھنسے رہیں بلکہ عملی قدم اُٹھائیں۔ 

کامیاب انٹرپرینیور ایک زبردست آئیڈیا کو کبھی بھی مہینوں کاغذ تک محدودرکھ کر اپنا قیمتی وقت ضائع نہیں کرتا۔ اپنے وقت کا مؤثر استعمال کریں اور وقت کے ساتھ سامنے آنے والے چیلنجز کے مطابق اپنے پلان میں ترمیم کریں۔ سب سے اہم قدم، پہلا عملی قدم اُٹھانا ہوتا ہے۔ یہ بات تعمیراتی صنعت کے انٹرپرینیورز پر اور بھی زیادہ لاگو ہوتی ہے، کیونکہ اس صنعت میں اپنا وجود برقرار رکھنے کے لیے ہر صورت کام کو جاری رکھنا ناگزیر ہوتا ہے۔ اگر آپ کام کو مکمل نہیں کریں گے تو ایک جگہ آکر ساری چیزیں اَٹک جائیں گی اور آپ بُری طرح پھنس کر رہ جائیں گے۔

آپ کی طاقت

اگر آپ کو ناکامی سے ڈر لگتا ہے تو اس سے بچنے کے لیے محنت کریں۔ اگر آپ میں ناکامی کا خوف موجود ہے تو اس سے پریشان ہوکر، کام کاج چھوڑ کر ایک طرف ہوجانے کے بجائے، اسے اپنی طاقت بنائیں اور اپنی منزل کی طرف رواں دواں رہیں۔ کہتے ہیں کہ ہر انٹرپرینیور ز کے اندر عدم تحفظ کا احساس موجود رہتا ہے، تاہم وہ اپنے کام کے ذریعے اس پر حاوی رہتا ہے۔ 

عدم تحفظ کے احساس کو اپنی توانائی بنائیں، آگے بڑھیں اور کامیابی کے لیے اعتماد تلاش کریں۔ تعمیراتی صنعت میں انٹرپرینیورز کو کئی سطح پر ناکامیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے، کبھی کسی انفرادی منصوبے میں ناکامی کی صورت میں تو کبھی کنٹریکٹرز اور سپلائرز کے ساتھ تعلقات میں خرابی کی صورت میں۔

اپنے وسائل پیدا کریں

کسی بھی عمومی انٹرپرینیور کے مقابلے میں، تعمیرات کی صنعت سے وابستہ انٹرپرینیورز کو باوسائل ہونا چاہیے۔ تعمیرات کی صنعت میں وقت کو پیسہ سمجھا جاتا ہے۔ اس لیے یہ اہم ہے کہ آپ اپنے پاس دستیاب تمام وسائل کو ’کیش فلو‘ بڑھانے کے لیے استعمال کریں۔ لنکڈاِن کے شریک بانی رِیڈہوفمین کہتے ہیں، ’’کمپنی شروع کرنے کا مطلب اونچی پہاڑی کے کنارے پر پہنچ کر کود جانا اور پھر تیزی سے نیچے آنے کے اس محدود وقت میں پیراشوٹ تیار کرنا ہے‘‘۔

آپ نوجوان آرکیٹیکٹس، انجینئرز اور کنٹریکٹرز کو بلامعاوضہ یا انتہائی کم معاوضہ پر انٹرن شپ پروگرام کی پیشکش کرسکتے ہیں، جو نا صرف آپ کی کمپنی کے لیے کارگر ثابت ہوں گے بلکہ یہ ان کے کیریئر کو بھی مہمیز دے گی۔

منافع پر نظر رکھیں

اگر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کے کاروبار کا حجم کروڑوں اور بتدریج اربوں تک پہنچ جائے تو ہر پروجیکٹ کی خالص شرحِ منافع پر نظر رکھیں۔ آپ کے پروجیکٹ اور کمپنی کی کامیابی اس سے جُڑی ہوئی ہے۔ ساتھ ہی ’کیش فلو‘ پر بھی نظر رکھیں۔ یہ کام ایک اکاؤنٹنٹ آپ کے لیے بآسانی کردے گا۔ کیش فلو شیٹ سے آپ کو پتہ چلے گا کہ پروجیکٹ کی وصولیوں اور ادائیگیوں کی کیا صورتِ حال ہے اور اس پر آپ کا خالص منافع کتنا ہے۔ 

یہ آپ کی کمپنی کی مالی صحت جانچنے کا سب سے اہم اور آسان طریقہ ہے۔ اپنے بینک اکاؤنٹ میں رکھے زیادہ کیش سے خوش نہ ہوں، جب تک کہ آپ کو ادائیگیوں کی صورتِ حال کا علم نہ ہو، کیوں کہ وصول ہونے والا کیش جلد ہی ادائیگیوں کی نذر بھی ہوسکتا ہے۔ اس لیے اپنی کمپنی کے کیش فلو پر نظر رکھیں اور اسے ہرگز نظرانداز نہ کریں۔

تبدیلی کو خوش آمدید کہیں

بہت سارے لوگ تبدیلی کو پسند نہیں کرتے۔ یہ ایک مثبت سوچ نہیں ہے۔ مثبت سوچ رکھنے والے افراد کے لیے تبدیلی کئی مواقع لے کر آتی ہے۔ کامیاب کنسٹرکشن انٹرپرینیور ہر وقت اپنی ٹیم سے یہ پوچھتے ہیں: ’’ہم چیزوں کو اپنے لیے زیادہ آسان اور زیادہ مؤثر کس طرح بنا سکتے ہیں؟‘‘ اس کلچر سے فائدہ یہ ہوتا ہے کہ آپ کی ٹیم ہر آئے دن نئے نئے آئیڈیاز لے کر آپ کے سامنے ہوتی ہے۔ 

ہمیشہ بہتری کے لیے کوشش کریں، چاہے اس کے لیے آپ کو نئی سرمایہ کاری کرنی پڑے۔ اپنے بزنس ماڈل، اپنے سسٹمز اور اپنی سوچ میں تبدیلی لانے سے مت گھبرائیں۔ اگر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کی کمپنی کی ترقی کا سفر جاری و ساری رہے تو صارفین کے بدلتے رجحانات کے ساتھ آپ کو تبدیلی کو گلے لگانا ہوگا۔