Advertisement

نشان حیدر حاصل کرنے والے پہلے کشمیری کون؟

September 06, 2019
 

Your browser doesnt support HTML5 video.

’نائیک سیف علی جنجوعہ‘ نشان حیدر حاصل کرنے والے پہلے کشمیری

1948 میں پاک بھارت جنگ کے دوران جرات و بہادری سے لڑتے ہوئے شہید ہونے والے نائیک سیف علی جنجوعہ کو ہلال کشمیر سے نوازا گیا، جسے بعد ازاں نشان حیدر کے اعزاز میں بدل دیا گیا یوں نشان حیدر حاصل کرنے والے وہ پہلے کشمیری شہید بن گئے۔

آزاد کشمیر کی تحصیل نکیال کےسپوت نائیک سیف علی شہید نے 1948 کی پاک بھارت جنگ میں پیرکلیوہ کےمقام پر دشمن کو ناکوں چنے چبواتے ہوئے جام شہادت نوش کیا۔

ان کی خدمات کے اعتراف میں انہیں آزاد کشمیر حکومت کی جانب سےسب سے بڑے فوجی اعزاز ہلال کشمیر سے نوازا گیا، جو پاکستان کےنشان حیدر کے مساوی ہے، 6 ستمبر1999 کو نائیک سیف علی جنجوعہ کے لیے نشان حیدر کے اعزاز کا اعلان ہوا جو اُن کے بیٹے صوبیدار میجر محمد صدیق کو دیا گیا۔

نائیک سیف علی جنجوعہ 18 سال کی عمر میں 1941ء کو برٹش انڈین آرمی میں شامل ہوئے، 1947ء میں وہ سردار فتح محمد کریلوی کی حیدری فورس میں شامل ہوگئے۔ جہاں انہیں نائیک کاعہدہ دیا گیا اور انہیں بدھا کھنہ کے مقام پر دشمن سے دفاع کا حکم دیا گیا دشمن نے بھاری توپ خانے سمیت فضائی حملہ کردیا۔

نائیک سیف علی نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر دشمن کا بڑا حملہ پسپا کیا اور 25 اور 26 اکتوبر کی درمیانی شب دشمن کی توپ کا ایک گولہ لگنے سے آپ شہید ہوگئے۔


مکمل خبر پڑھیں