آپ آف لائن ہیں
پیر14؍ذیقعد 1441ھ 6؍جولائی 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

مہنگائی کیخلاف اب تک کریک ڈاؤن ہوجانا چاہئے تھا، علی محمد


کراچی (ٹی وی رپورٹ)ن لیگ کے رہنما محسن شاہنواز رانجھا نے کہا ہے کہ فواد چوہدری احساس محرومی کاشکارہیں، ان کا نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس کو غلط کہنا اپنی پارٹی کی ٹانگ کھینچے والی بات ہے، مالیاتی کمیشن میں مشیرخزانہ حفیظ شیخ اضافی رکن ہیں۔

چینی کی ایکسپورٹ پر سبسڈی بند کرکے اس کا پیسہ کسانوں کوملنا چاہئے،پٹرول کی قیمتوں میں کمی کے باوجود مہنگائی کم نہ ہونا حکومتی گورننس کی ناکامی ہے۔وہ جیو کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“ میں میزبان حامد میرسے گفتگو کررہے تھے۔

 پروگرام میں وزیر مملکت برائے پارلیمانی امورعلی محمد خان اور وزیر اطلاعات سندھ ناصر حسین شاہ بھی شریک تھے۔ناصر حسین شاہ نے کہاکہ کوروناوائرس پھیل چکا ہے لمبے عرصے اس کے ساتھ چلنا ہے، موجودہ صورتحال میں احتیاطی تدابیرپرعمل ہی بچاؤ کا راستہ ہے، پٹرول کی قیمتیں کم ہونے کا مہنگائی پر اثر ضرور آنا چاہئے، مہنگائی روکنا صوبائی حکومتوں کا کام ہے،وزیراعلیٰ نے تمام کمشنرز کو پرائس کنٹرول کرنے کی ہدایت دی ہے۔

علی محمد خان نے کہا کہ فواد چوہدری کا نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس کی تحقیقات کروانے کا مطالبہ حکومت پرعدم اعتماد ہے، کوئی سرکاری افسر وزیراعظم کے سامنے جعلی رپورٹ پیش کرنے کی جرأت نہیں کرسکتا، مہنگائی کے خلاف اب تک چیف سیکرٹریز کا کریک ڈاؤن ہوجانا چاہئے تھا،وزیراعظم نے کہا کہ چینی اسکینڈل میں لوٹا گیا پیسہ بھی کسانوں کوملنا چاہئے۔

 ن لیگ کے رہنما محسن شاہنواز رانجھا نےکہا کہ حکومت طیارہ حادثے میں میتوں کی شناخت کروائے تاکہ لوگوں کو سکون مل سکے، لاک ڈاؤن میں نرمی کے بعدایس او پیز پر عملدرآمدنہ ہونا حکومت کی بڑی غفلت تھی، حکومتی وزراء پارلیمنٹ میں آکر سوالات کے جواب دیں، اپوزیشن عوامی مسائل پربات کرتی ہے لیکن اجاگرباقی معاملات ہوتے ہیں۔

پٹرول کی قیمتوں میں کمی کے باوجود مہنگائی کم نہ ہونا حکومتی گورننس کی ناکامی ہے، پاکستان میں قوانین موجود ہیں مگرعملدرآمد نہیں ہوتا ہے، مساجد کے علاوہ کہیں پانچ فیصد سے زائدلوگوں کو ماسک پہنے نہیں دیکھا۔محسن شاہنوازرانجھا نے کہا کہ فواد چوہدری احساس محرومی کاشکارہیں، انہیں قلق ہے کہ وہ حکومت کے بڑے فیصلوں میں شامل نہیں ہوتے۔

فواد چوہدری کا نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس کو غلط کہنا اپنی پارٹی کی ٹانگ کھینچے والی بات ہے، فواد چوہدری نواز شریف کے بجائے کورونا پرا سد عمرکو خط لکھتے توا چھا ہوتا، وزیرسائنس وٹیکنالوجی جس کام کی تنخواہ لے رہے ہیں اگر وہی کام کریں تو اچھا ہوتا، نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس کابینہ میں پیش ہوئی تھیں جہاں فواد چوہدری بھی تھے۔

فواد چوہدری کوعدالت کے فیصلے کا انتظارکرنا چاہئے،عدالت فیصلہ کرتی ہے کہ نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس درست نہیں ہیں تو وہ واپس آجائیں گے۔محسن شاہنواز رانجھا کاکہنا تھا کہ مالیاتی کمیشن آئین میں دیئے فارمولے کے مطابق نہیں بنایاگیا، مالیاتی کمیشن میں مشیرخزانہ حفیظ شیخ اضافی رکن ہیں، چینی کی ایکسپورٹ پرسبسڈی بند کرکے اس کا پیسہ کسانوں کوملنا چاہئے۔

وزیر اطلاعات سندھ ناصر حسین شاہ نے کہاکہ سندھ میں کورونا ٹیسٹوں کے مثبت آنے کی شرح 25فیصد ہے، آبادی کے تناسب سے کراچی کے مقابلہ میں لاہور میں کیسز زیادہ ہیں، پی ٹی آئی خوش قسمت ہے اسے باشعور اپوزیشن ملی جو لاک ڈاؤن کی حمایت کرتی رہی، سندھ میں لاک ڈاؤن کی بات کریں تو پی ٹی آئی ہمارے خلاف پریس کانفرنسیں کررہی ہوتی ہے۔

مکمل لاک ڈاؤن مارچ یا اپریل میں کارآمد ہوسکتا تھااب مکمل لاک ڈاؤن نہیں لگایا جاسکتا ، کوروناوائرس پھیل چکا ہے لمبے عرصے اس کے ساتھ چلنا ہے، موجودہ صورتحال میں احتیاطی تدابیرپرعمل ہی بچاؤ کا راستہ ہے، پیر کی میٹنگ کے فیصلوں پر پورے ملک میں عمل کیا جائے تواچھی بات ہوگی، ہمیں ایس اوپیز کے ساتھ وفاقی حکومت کے ساتھ چلنا ہے۔

ناصرحسین شاہ کا کہنا تھا کہ پٹرول کی قیمتیں کم ہونے کا مہنگائی پر اثر ضرور آنا چاہئے، مہنگائی روکنا صوبائی حکومتوں کا کام ہے سندھ میں اس پر عمل ہورہا ہے، وزیراعلیٰ نے تمام کمشنرز کو پرائس کنٹرول کرنے کی ہدایت دی ہے، کاروباری لوگوں کے سامنے ہاتھ جوڑ کر بھی قیمتیں کم کروائیں گے۔

مہنگائی کم کروانے کیلئے کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔

اہم خبریں سے مزید