آپ آف لائن ہیں
بدھ9؍ربیع الثانی 1442ھ25؍نومبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کراچی کے مسائل، لوڈشیڈنگ، سندھ اور قومی اسمبلی سے ایم کیو ایم کا واک آؤٹ

کراچی کے مسائل، لوڈشیڈنگ، سندھ اور قومی اسمبلی سے ایم کیو ایم کا واک آؤٹ



کراچی (اسٹاف رپورٹر ) سندھ اسمبلی ، ایم کیوایم پاکستان نے صوبائی بجٹ پر تنقید کرتے ہوئے اسے مسترد کرتے ہوئے ایوان سے واک آؤٹ کر نے کے بعد اسمبلی کی سیڑھیوں پردھرنا دے دیا ،متحدہ کے پارلیمانی لیڈر کنور نوید جمیل نے بجٹ پر عام بحث کے دوران اس بات پر کڑی تنقید کی کہ بجٹ میں صوبے کے شہری علاقوں کو مکمل طورپرنظر انداز کردیا گیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کو گزشتہ بجٹ کا کچھ علم نہیں ہے،خزانہ کہاں خرچ ہوا ہے؟جو تکلیف ہے اسی کا ذکر کریں گے۔کراچی کے لیے کوئی نئی اسکیم نہیں ہے۔کراچی کے لیے 2016 کی اسکیموں کو 2017 میں ختم کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ 36 اسکیموں کو رکھا گیا اگلے سال ان کو بھی ختم کردیا گیا۔مختلف محکموں کی کراچی کی اسکیموں کو ختم کردیا گیا۔کراچی میں ہر شخص پانی کی بنیادی ضرورت سے پریشان ہے جیسے جیسے گرمی بڑھ رہی ہے پانی کی کمی بڑھ رہی ہے۔پانچ سال مکمل ہوگئے ہیں آج بھی ہم کہہ رہے ہیں کہ پانی کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب بھی لسانی تفریق بڑھتی ہے تو پیپلز پارٹی کے دور میں بڑھتی ہے۔پیپلز پارٹی کے دور میں پکا قلعہ آپریشن اور دیگر آپریشن ہوئے۔ کنور نوید نے کہا کہ گزشتہ بجٹ میں بھی ہم یہی گنوا رہے تھے اب بھی یہی گنوا رہے ہیں۔

اہم خبریں سے مزید