آپ آف لائن ہیں
پیر6؍رمضان المبارک 1442ھ 19؍اپریل2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کمل ہاسن کا نریندر مودی سے چبھتا سوال

مشہور بھارتی اداکار کمل ہاسن نے وزیراعظم نریندر مودی سے چبھتا ہوا سوال پوچھ لیا۔

سیاسی جماعت مکل نیدھی مایم (ایم این ایم) کے سربراہ کمل ہاسن نے نریندر مودی سے استفسار کیا کہ ایسے وقت میں جب نصف بھارت بھوکا ہے، ایسے میں پارلیمنٹ کی نئی عمارت کی کیا ضرورت ہے؟

اتوار کے روز ایم این ایم کے سربراہ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر جاری بیان میں بھارتی وزیراعظم سے اس حوالے وضاحت دینے کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ نریندر مودی جی بتائیں کہ پارلیمنٹ کی نئی عمارت کی تعمیر کے لیے 1 ہزار کروڑ روپے خرچ کیے جانے کے پیچھے کیا عقلمندی ہے؟


کمل ہاسن نے مزید کہا کہ وہ بھی ایسے وقت میں جب بھارت کی آدھی سے زائد عوام کو بھوک لگی ہوئی ہے اور عالمی وبا کورونا وائرس کے باعث جو معاشی مشکلات کا شکار ہے۔

بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے صدیوں پرانی عظیم دیوار چین کی طرح نئی پارلیمنٹ کی عمارت کی تعمیر کے دعویٰ پر نامور اداکار اور سیاست دان نے نریندر مودی پر تنقید کی۔

انہوں نے کہا کہ دیوار چین کی تعمیر کے دوران ہزاروں لوگ جان سے گئے تھے، ڈریگن حکمرانوں نے جس کے متعلق کہا تھا کہ وہ عوام کے تحفظ کے لیے بنائی گئی ہے۔

کمل ہاسن نے یہ سوال جنوبی تامل ناڈو اسمبلی کے انتخابات کے لیے اپنی مہم کے ابتدا سے چند گھنٹے قبل اٹھایا اور کہا کہ ’معزز منتخب وزیراعظم آپ جواب دیں‘۔

وزیراعظم نریندر مود نے 10 دسمبر کو پارلیمنٹ کی نئی عمارت کا سنگ بنیاد رکھا تھا، جس کے متعلق توقع کی جارہی ہے کہ وہ 2022 تک مکمل ہوجائے گی۔

تامل ناڈو میں ریاستی اسمبلی کے انتخابات اپریل تا مئی 2021 میں ہوں گے، کمل ہاس نے الزام لگایا کہ حکام نے آخری وقت میں انہیں شہری علاقوں میں انتخابی مہم چلانے کی اجازت نہیں دی۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید