آپ آف لائن ہیں
اتوار22؍ رجب المرجب 1442ھ 7؍مارچ2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کینیڈا کے اسکول میں مجھے ڈرایا گیا، سنی لیون

بھارتی اداکارہ سنی لیون کا کہنا ہے کہ کینیڈا میں بچپن کے دنوں میں مجھے اسکول میں ڈرایا اور دھمکایا گیا۔ اسکول میں بچے مجھے میری رنگت، بالوں اور لباس کی وجہ سے چھیڑا کرتے تھے۔

بھارتی میڈیا کو دیے گئے انٹرویو میں سنی لیون کا کہنا تھا کہ مجھے اس سطح پر ڈرایا دھمکایا نہیں گیا کہ جس طرح لوگ سوچتے ہیں کہ کچھ لوگوں نے مجھے برا بھلا کہا۔ میں سانولی رنگت، بازو اور پیروں پر گہرے سیاہ بال والی عام سی بھارتی لڑکی تھی جس کا پہناوا بھی بہت اچھا نہ تھا۔ اس وجہ سے مجھے اسکول میں برے سلوک کا سامنا کرنا پڑا۔

اداکارہ کے مطابق بالغ ہونے پر بھی اس تجربے کے منفی اثرات مجھ میں قائم رہے، اس میں سے کچھ برے سلوک ساری زندگی مجھے محسوس ہوتے رہیں گے ۔

سنی لیون کا کہنا تھا مجھے لگتا ہے کہ برا بھلا کہنا ایک دائرے میں گھومتا ہے۔ ہم دیکھتے ہیں کہ جب کسی کو برا بھلا کہا جائے تو وہ دوسرے لوگوں کو برا بھلا کہہ کر اپنا بدلہ لے لیتا ہے، لیکن اگر آپ کو کسی کی جانب سے برا بھلا کہا جائے تو ہم دوسروں کے ساتھ یہ برا سلوک نہ کرنے کی شعوری طور پر کوشش کر سکتے ہیں۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید