• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

معلوم نہیں تھا ہمارے ساتھ درندہ صفت انسان موجود ہے، والد ماہم

کراچی کے علاقے کورنگی میں زیادتی کے بعد قتل کی گئی بچی ماہم کے والد عبدالخالد نے کہا ہے کہ ملزم ذاکر ہمارے ساتھ اٹھتا بیٹھتا کھاتا پیتا تھا۔

میڈیا سے گفتگو میں ماہم کے والد نے کہا کہ ہمیں نہیں معلوم تھا کہ ہمارے ساتھ درندہ صفت انسان موجود ہے، مجھے معلوم ہوتا کہ یہ جانور ہے تو پہلے ہی اسے محلے سے نکال دیتا۔

انہوں نے کہاکہ ملزم شادی شدہ اور 2 بچوں کا باپ ہے، ذاکر کی بیٹی ماہم سے ڈیڑھ سال بڑی ہے اور ماہم کی دوست تھی۔

عبدالخالد نے مزید کہا کہ ملزم نے یہ نہیں سوچا کہ اس معصوم بچی سے تھوڑی بڑی اس کی بیٹی ہے، کم از کم اسے ماہم کا چہرہ دیکھ کر اتنی غیرت و شرم آنی چاہیے تھی۔

اُن کا کہنا تھا کہ جس کے ساتھ ملزم یہ حرکت کر رہا تھا وہ اسے چاچا کہتی تھی، ذاکر نے یہی سوچا کہ میں غریب آدمی ہوں، رو دھو کرچپ کرجاوں گا۔

ماہم کے والد نے اس موقع پر اپیل کی ایسے ملزم کو کم از کم سر عام سزائے موت دی جانی چاہیے۔

قومی خبریں سے مزید