آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 23؍ذوالحجہ 1440ھ 25؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی میں اینکر پرسن مرید عباس اور ان کے دوست خضر حیات کے قتل کی تحقیقات ایک بڑے مالیاتی اسکینڈل میں داخل ہوچکی ہیں، ایف آئی اے، ایف بی آر اور دیگر اہم ادارے بھی معاملے کی چھان بین میں شامل ہوگئے ہیں۔

اس سلسلے میں اہم انکشافات سامنے آئے ہیں تازہ رپورٹس کے مطابق ملزم عاطف کے پاس بعض اینکر پرسنز، میڈیا سے تعلق رکھنے والے افراد اور دوستوں نے بھاری سرمایہ کاری کر رکھی تھی۔ جن میں سے پولیس نے لگ بھگ 30 بڑے سرمایہ کاروں کی تفصیلات جمع کی ہیں۔ جن کے بیانات کا سلسلہ جاری ہے۔

عاطف زمان کے مالیاتی اسکینڈل میں کس نے کتنا مال لگایا، جیو نیوز کے مطابق عاطف زمان کے پاس اس کے سسر اور بھائی کی بھی بھاری سرمایہ کاری نکلی ہے۔

رپورٹ کے مطابق عاطف زمان کو 54 کروڑ روپے کا سب سے زیادہ سرمایہ یاسر نامی شخص نے دیا تھا، جس کے بعد دوسرے نمبر پر ایاز شوکت کی اہلیہ صدف ہیں جن کی 17 کروڑ 2 لاکھ روپے کی سرمایہ کاری سامنے آئی ہےجبکہ مقتول اینکر مرید عباس نے 11 کروڑ ساڑھے 72 لاکھ روپے کا سرمایہ ملزم عاطف کو فراہم کیا تھا۔

عمر حیات نے 8 کروڑ 56 لاکھ جبکہ اینکر مدثر اقبال نے 7 کروڑ 50 لاکھ 57 ہزار لگا رکھے تھے۔ ملزم عاطف کے سسر عظیم خان نے بھی اپنے داماد کو 4 کروڑ 52 لاکھ 17 ہزار سرمایہ کاری کے نام پر دیئے۔ ایک بینک مینیجر سیف نے 3 کروڑ 91 لاکھ 75 ہزار روپے کی سرمایہ کاری کی جبکہ ایک اینکر پرسن فواد زیدی نے تین کروڑ 34 لاکھ روپے منافع پر دے رکھے تھے۔

عدنان مصطفی نے 2 کروڑ 92 لاکھ جبکہ حنین نے 2 کروڑ 72 لاکھ روپے دیئے۔ پروڈیوسر لبنیٰ احمد نے ایک کروڑ 75 لاکھ جبکہ ہمایوں نے ایک کروڑ 95 لاکھ دیئے۔

عاطف زمان کے بھائی عادل زمان کے نام بھی ایک کروڑ 50 لاکھ 50 ہزار کی سرمایہ کاری نکلی ہے۔ ماجد حسین کا ایک کروڑ 29 لاکھ جبکہ عرفان حیدر کے ایک کروڑ 21 لاکھ روپے کا ریکارڈ سامنے آیا ہے۔ ایک ریٹائرڈ میجر مدثر کے ایک کروڑ 20 لاکھ اور ایک مکینک صابر کی 87 لاکھ روپے کی انویسٹمنٹ سامنے آئی ہے۔

ایک شہری حماد خان 72 لاکھ، بینش اقبال نے 37 لاکھ، سدرا سید نے 35 لاکھ روپے سرمائے پر لگائے۔ کرن شاہ نے ساڑھے 18 لاکھ اور شاہد نے 17 لاکھ 56 ہزار روپے کی سرمایہ کاری کی۔

سرمایہ کاری کرنے والے دیگر شہریوں میں راجہ محمود، عزیز عباسی، طارق راجپوت بھی شامل ہیں۔

قومی خبریں سے مزید