آپ آف لائن ہیں
ہفتہ10؍شعبان المعظم 1441ھ4؍اپریل 2020ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

ایس ایس پی مفخر عدیل کی گمشدگی میں پیشرفت، سرکاری جیپ مل گئی


لاہور سے ایس ایس پی پنجاب کانسٹیبلری مفخر عدیل کے لاپتہ ہونے کے معاملے کی تحقیقات میں پیش رفت ہوئی ہے اور ان کے زیر استعمال سرکاری جیپ جوہر ٹاؤن کے علاقے سے مل گئی ہے ۔

پولیس ذرائع کےمطابق ایس ایس پی مفخر عدیل کے زیر استعمال سرکاری جیپ جوہر ٹاؤن میں ایک شاپنگ مال کے قریب سے ملی ہے، گاڑی تحویل میں لے کر سی آئی اے سینٹر ماڈل ٹاؤن منتقل کردی گئی ہے ۔

پولیس کےمطابق ایس ایس پی مفخر عدیل اسی سرکاری جیپ میں اپنے گھر سے نکلے تھے اور ان کا موبائل فون بھی جی تھری بلاک جوہر ٹاؤن میں ہی بند ہوا تھا۔

واضح رہے کہ ایس ایس پی مفخر عدیل کے اہل خانہ نے پولیس کو بتایا کہ مفخر عدیل کل رات کھانا کھا کر گھر سے اپنی گاڑی پرنکلے تھے ، لیکن رات گئے وہ واپس نہیں آئے بعدازاں ان کا موبائل فون بند ہوگیا۔

لاپتہ ایس ایس پی پنجاب کانسٹیبلری مفخر عدیل لاہور میں ایس پی سٹی، ایس پی لاہور ہائی کورٹ سیکیورٹی اور ایف آئی اے سمیت دیگر سیٹوں پر کام کر چکے ہیں۔

دوسری جانب ایس ایس پی مفخر عدیل کے قریبی دوست سابق اسسٹنٹ اٹارنی جنرل شہباز تتلہ بھی مبینہ طور پر 7فروری کو اغواء ہو گئے تھے جس کےاغوکامقدمہ اغواکی دفع365 ت پ کے تحت تھانہ نصیر آباد پولیس نے 20/2020ء درج کر لیا تھا۔

یہ مقدمہ شہباز احمد کے بھائی سجاد احمد کی درخواست پر درج کیا گیا تھا جس میں مدعی نے موقف اختیار کیا تھا کہ میرا حقیقی بھائی شہباز ولد نعمت علی جس کا دفتر ایل اے ٹو گلبرگ تھری اکبری مارکیٹ نزد کلمہ چوک پر ہے وہ 7فروری کو شام 7بجے اپنے دفتر سے لاپتہ ہے اور تمام عزیز ا قارب سے معلوم کرنے کے باوجود اس کا علم نہیں ہوسکا ،جس پر پولیس نے مقدمہ درج کر لیا تھا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ایس ایس پی مفخر عدیل اور شہباز بہت قریبی دوست ہیں اور دونوں کی کچھ دنوں کے اندر گمشدگی معنی خیز ہے ،اور ان دونوں کی گمشدگی کا ایک دوسرے سے بہت گہرا تعلق ہے۔

ایک پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ 6روزپہلے اغواہونیوالے سابق اسسٹنٹ اٹارنی جنرل شہبازتتلہ کی آخری کالز بھی مفخرکوموصول ہوئی تھیں۔

قومی خبریں سے مزید