آپ آف لائن ہیں
منگل20؍ذی الحج 1441ھ 11؍اگست 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

پاکستان میں بڑے پیمانے پر مذہبی امتیاز موجود ہے: حمزہ عباسی

اسلام کی خاطر شوبز کی دنیا سے عارضی کنارہ کشی اختیار کرنے والے حمزہ علی عباسی کا کہنا ہے کہ پاکستان میں بڑے پیمانے پر مذہبی امتیاز موجود ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اسلام آباد میں مندر بنائے جانے کے تنازع کے تناظر میں ایک پیغام شیئر کیا جس میں انہوں نے یہ یاد دہانی کروائی کہ پاکستان کوئی سلطنت نہیں نا ہی یہاں بادشاہت ہے۔

انہوں نے لکھا کہ ہم مسلمانوں نے پاکستان کو فتح نہیں کیا بلکہ پاکستان ایک مسلم اکثریت ریاست ہے۔

سابق اداکار نے یہ بات بھی دہرائی کہ قیام پاکستان کے وقت 14 اگست 1947 کو جو مسلم اکثریت والے علاقوں میں مقیم تھا، خود بخود پاکستان کا شہری بن گیا۔

حمزہ علی عباسی نے یہ بھی لکھا کہ وہ یہ بات تسلیم کرتے ہیں پاکستان میں بڑے پیمانے پر مذہبی امتیا پایا جاتا ہے۔

انہوں نے لکھا کہ مزید منافقت سے اجتناب کریں۔

واضح رہے کہ سی ڈی اے نے اسلام آباد میں 2354مربع گز یعنی 3.89کنال کا پلاٹ ہندو برادری کو مفت الاٹ کیا تھا تاکہ ہندو برادری ٹمپل، کمیونٹی سنٹر اور عبادت گاہ تعمیر کرسکے۔

گزشتہ روز سی ڈی اے کے بلڈنگ کنٹرول سیکشن نے سیکٹر ایچ نائن ٹو اسلام آ باد میں ہندئوں کے پہلے مندر کی تعمیر روک دی تھی۔

ڈپٹی ڈائریکٹر راحیل جو نیجو نے موقع پر جا کر تعمیراتی کام کرانیوالے ہندو برادری کے عہدیداروں کو بتایا کہ بلڈنگ بائی لاز کے تحت اسلام آ باد میں کوئی بھی کنسٹرکشن بلڈنگ پلان کی منظوری کے بغیر نہیں کی جاسکتی۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید