آپ آف لائن ہیں
بدھ10؍ربیع الاوّل 1442ھ28؍اکتوبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

ملبے تلے دبے شخص کا اہلیہ کے نام آخری پیغام


’بچ گیا تو اللّٰہ کا شکر ہے نہیں تو اللّٰہ حافظ‘یہ الفاظ بھارتی ریاست مہاراشٹرا میں ممبئی کے قریب ضلع تھانے میں تین منزلہ رہائشی عمارت کے ملبےتلے دبے شخص تھے۔

زمین بوس عمارت کے ملبے تلے 10 گھنٹے تک پھنسے رہنے والے شخص نے موبائل فون پر اہلیہ کے لیے اپنا آخری پیغام ریکارڈ کیا، زندگی اور موت کی کشمکش سے گزرتے شخص کی یہ ویڈیو، جس میں بے بسی اور امید کو دیکھا جاسکتا ہے۔

رہائشی عمارت گرنے کے اس حادثے میں 41 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوئے تھے، عمارت منہدم ہونے کے فوری بعد ہی ریسکیو اداروں نے امدادی کارروائی شروع کردی تھی اور ملبے تلے سے 25 افراد کو زندہ نکال لیا۔

ملبے تلے پھنسے ایک شخص خالد خان نے 10 گھنٹے کے دوران مختلف صورتحال اور کیفیات پر مبنی کئی ویڈیوز ریکارڈ کیں، جس میں اپنی اہلیہ کے نام آخری پیغام بھی شامل تھا۔

آخری پیغام میں خالد کو اپنے زندہ بچ جانے کا یقین نہیں تھا، جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ وہ کیسے پسینے میں شرابور اور پھولتی سانس کے ساتھ اپنی اہلیہ کے نام پیغام میں کہہ رہا ہے ’اگر میں بچ گیا تو اللّٰہ کا شکر نہیں تو اللّٰہ حافظ‘۔

انہوں نے مزید کہا کہ اب میں نے خود کو بیڈ کے نیچے کرلیا ہے، اس سے قبل میرے پاس ایک بیم بھی آکر گرا تھا جبکہ 2 گھنٹے پہلے تک میرا پاؤں ملبے میں پھنسا رہا۔

خالد جو تقریباً 10 گھنٹے تک ملبے تلے دبا رہا، جب اسے ریسکیو ورکرز نے منہدم عمارت کے ملبے سے نکالا تو وہاں موجود لوگوں نے اللّٰہ اکبر کے نعرے لگائے، اس موقع پر متاثرہ شخص نے کہا کہ اسے نئی زندگی ملی ہے، اس وقت مجھے پتہ نہیں تھا کہ میں زندہ بچوں گا بھی یا نہیں۔

اب تک عمارت گرنے کی وجوہات سامنے نہیں آسکی ہیں، مہاراشٹرا میں اس طرح کے واقعات میں اضافہ ہوتا جارہا ہے، خاص طور پر مون سون کے دوران ایسے حادثات میں اضافہ ہوجاتا ہے، جس کی وجہ ناقص تعمیرات بتائی جاتی ہیں۔

خاص رپورٹ سے مزید