آپ آف لائن ہیں
منگل24؍رجب المرجب 1442ھ 9؍مارچ 2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

عالمی اداروں کو مقبوضہ کشمیر نظر نہیں آرہا، ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی

ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری نے کہا ہے کہ عالمی اداروں کو مقبوضہ کشمیر نظر نہیں آرہا، انہیں دہرا معیار ختم کرنا ہوگا۔

انسانی حقوق کے عالمی دن پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ انسانی حقوق کے تحفظ کے لیے پارلیمنٹ کا اہم کردار ہے۔

انھوں نے کہا کہ 1400 سال قبل ہمارے پیارے نبی حضرت محمد مصطفیٰ ﷺؑ نے رنگ و نسل کا فرق ختم کیا۔

 ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ پاکستان بنا تو دوقومی نظریے کی بنیاد پر بنا، کیونکہ اُس وقت مسلمانوں کو آزادی حاصل نہیں تھی، اور انسانی حقوق کی بنیاد پر ہی پاکستان معرض وجود میں آیا۔ 

ان کا کہنا تھا کہ آج بھی ہم غلامی کے دور میں رہ رہے ہیں، نئے قانون بنائے گئے تو ہم عوام کو بنیادی حقوق دے پائیں گے۔


ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ آج پارلیمنٹ پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ انسانی حقوق کے بارے میں سوچے، پارلیمنٹ کا مقصد یہ ہونا چاہیے کہ 22 کروڑ عوام کے حقوق کے لیے قانون سازی کی جائے۔

انھوں نے مغربی ممالک کی مثال دیتے ہوئے کہا کہ آج مغرب پر نظر ڈالی جائے تو وہاں بھی کئی معاملات پر آزادی نہیں ہے۔

اپنے خطاب کے دوران انھوں نے بھارت کی انسانی حقوق کی پامالیوں کی مثال دیتے ہوئے کہا کہ بھارت جو جمہوریت کا دعویدار ہے وہ کشمیر کے ساتھ کیا سلوک کر رہا ہے؟

انھوں عالمی اداروں کو بھی ہدف تنقید بنایا اور کہا کہ عالمی اداروں کو مقبوضہ کشمیر نظر نہیں آرہا، اب عالمی اداروں کو دہرا معیار ختم کرنا ہوگا۔

قومی خبریں سے مزید