آپ آف لائن ہیں
اتوار15؍ رجب المرجب 1442ھ 28؍ فروری2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

مری، مالا کنڈ میں برفباری، منگلا میں ہریالی، سیاح رخ کرنے لگے

ملک کے بیشتر علاقے شدید سردی کی لپیٹ میں ہیں، مری اور مالاکنڈ میں ہونے والی برف باری، جبکہ منگلا ڈیم کے اطراف دلکش سبزے کی کشش سیاحوں کا دل لبھانے لگی۔

مری میں برف باری کا نیا سلسلہ شروع ہو گیا ہے، بڑی تعداد میں سیاح مری کا رخ کر رہے ہیں، سڑکوں پر پھسلن کی وجہ سے ٹریفک جام ہے۔

ملکہ کوہسار مری کے علاوہ ناران، شوگران، دیامر اور غذر میں شدید برف باری ہوئی، نیاٹ ویلی اور دیگر مقامات پر برف باری کے باعث رابطہ سڑکیں بند ہیں۔

مالا کنڈ ڈویژن کے ضلع لوئر دیر کے بالائی علاقوں میں برف باری کا نیا سلسلہ شروع ہو گیا ہے اور سیاح چوٹیاں سر کرنے پہاڑوں پر پہنچ رہے ہیں۔

موسمِ سرما کے دوران منگلا ڈیم میں پانی کی سطح کم ہوتے ہی ہر طرف خوبصورت دلکش سبزہ اور ہریالی کے مناظر دل موہ لیتے ہیں، جن کی جانب کشش محسوس کرتے ہوئے لوگوں کی بڑی تعداد منگلا ڈیم کی جانب رخ کر رہی ہے۔

محکمۂ موسمیات کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم سرد اور خشک رہا جبکہ بالائی علاقوں میں ابر آلود رہا۔

چلاس میں موسلا دھار بارش ہوئی، اس کے علاوہ آزادکشمیر کے مختلف شہروں میں بھی بارش ہوئی۔

گوجرانوالہ، گجرات اور سیالکوٹ سمیت پنجاب کے کئی شہروں میں بھی آج ہلکی بارش کا امکان ہے۔


محکمۂ موسمیات نے اسلام آباد سمیت خطۂ پوٹھو ہار، نوشہرہ اور پشاور میں ہلکی بارش کی پیش گوئی کی ہے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران لیہہ، اسکردو اور استور میں درجۂ حرارت منفی 11 ڈگری سینٹی گریڈ رہا۔

گوپس میں درجۂ حرارت منفی 10، گلگت میں منفی 6، بگروٹ، کالام اور پارا چنار میں منفی 5 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

قومی خبریں سے مزید