دوسری عالمی جنگ کے فوجی کا خط 76 سال بعد ان کے گھر پہنچ گیا

January 12, 2022

دوسری عالمی جنگ کے دوران جرمنی میں تعینات ایک امریکی فوجی کی جانب سے میساچوسٹس میں اپنی والدہ کو بھیجا گیا خط 76 سال بعد اُن کے گھر پہنچ گیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق دوسری عالمی جنگ کے باضابطہ خاتمے کے وقت 22 سالہ آرمی سارجنٹ جون گونسالویس نے دسمبر 1945 میں ووبرن میں اپنی والدہ کو خط لکھا تھا۔

اپنی والدہ کو لکھے خط میں 22 سالہ فوجی نے کیا لکھا، یہاں پڑھیے:

’آج آپ کی طرف سے ایک اور خط موصول ہوا اور یہ سن کر خوشی ہوئی کہ سب کچھ خیریت سے ہے۔ میں ٹھیک ہوں لیکن یہاں جو کھانا ملتا ہے وہ شدید بُرا ہے، ’مجھے آپ سے پیار ہے، آپ کا بیٹا جون۔ مجھے امید ہے کہ آپ سے جلد ملاقات ہوگی۔‘

جنگ کے بعد وہ ووبرن میں اپنے خاندان کے پاس واپس آئے اور1949 میں انجلینا سے ملے جنہیں دہائیوں بعد اپنے شوہر کا خط موصول ہوا۔

جون نے انجلینا سے 1953 میں شادی کی اور ان کے ہاں پانچ بیٹے پیدا ہوئے، سال 2015 میں جون 92 برس کی عمر میں چل بسے۔

سابقہ فوجی کی بیوہ دہائیوں پرانا اپنے شوہر کا خط دیکھ کر حیران رہ گئی تھیں۔