’متوازن غذائیں‘ آپ کاحُسن اور جوانی برقرار رکھنے میں اہم کردار ادا کرتی ہیں

December 04, 2019
 

ہر خاتون کی خواہش ہوتی ہے کہ وہ بڑے عمر تک حسین وخوب صورت نظر آئے۔بعض خواتین اپنے چہرے پر بڑھاپے کے آثار اپنے بال اور چہرے پر نہیں دیکھنا چاہتیں۔

کئی خواتین بہت پیسہ خرچ کرکے سر کے بالوں کی سفیدی ،چہرے کی جلد کا ڈھلکنا چھپا نا چاہتی ہیں ۔آپ بڑھاپےکو تو روک نہیں سکتی لیکن جوانی میں بہتر ین لائف اسٹائل ، متوزان غذا اور ورزش کے ذریعے بڑھاپے کو سنوارا ضرور سکتی ہیں ۔عمر کاایک حصہ ایسا آتا ہے جب صحت اور حسن کے حوالےسے خواتین کو پریشانی لاحق ہونے لگتی ہے ۔اس میںپریشانی کی کوئی بات نہیں ہے ،کیوں کہ کچھ غذائیں ایسی ہیں جو آپ کی اس پریشانی کو ختم کرسکتی ہیں ۔اس ہفتے ہم آپ کو ان کے بارے میں بتارہے ہیں ۔

انار

اس پھل کے بیجوں میں اینٹی آکسائیڈنٹس اور وٹامن سی کافی مقدار میں ہوتاہے اور چہرے کی جھریوں ،خشکی اور دیگر عوارض سے بچانے میں مفیدہے۔ایک تحقیق کے مطابق وٹامن سی کا استعمال درمیانی عمر میں جلد کو خشکی اور جھریوں کا امکان کم کرتاہے۔انار میں موجود اینتھو سیان جلد کو پرکشش انداز جب کہ ایلیجک ایسڈ سورج کی شعاعوں سے ہونے والے نقصانات کی روک تھام کرتے ہیں۔

بلیوبیریز

یہ پھل چہرے کی سرخی کو بڑھانے میں مفید ہے۔اس پھل میں موجودوٹامن سی اور ای جلد کو نرم وملائم بناتے ہیں۔اس میں پائے جانے والے دیگر اجزاء جلد کی رنگت کو سنوارنے کا کام بھی کرتے ہیں۔

سبز پتوں والی سبزیاں

پالک سے لے کر ساگ تک یہ سبزیاں کیروٹین نامی جز سے بھر پور ہوتی ہیں۔کیروٹین جلد کے خلیات کو تحفظ دینے کے ساتھ ساتھ ان میں نمی کو بر قرارر کھتاہے۔یہ جلد کو ہونے والے نقصانات کو دور رکھنے میں بھی مفیدہیں۔بلڈ پریشر قابو میں رکھنے کے لیے بھی ان سبزیوں کو اہم تصور کیا جاتاہے۔

مشروم

مشروم میں ایک منرل سیلینیم ہوتا ہے ،جو جلد کو سورج کی شعاعوں سے ہونے والے نقصان سے تحفظ دیتاہے۔ایک تحقیق کے مطابق مشروم کا استعمال جسم میں تانبے یا کاپر کی سطح کو متوازن رکھتاہے ،جس کے نتیجے میں بالوں میں سفیدی جلد نہیں آتی۔

انڈے

انگلیوں کے ناخن کو پروٹین کی کمی کمزور کر سکتی ہے۔اس سے تحفظ کے لیے انڈوں کا استعمال مفید ہے جوبی کمپلیکس وٹامن سے بھر پور ہوتے ہیں۔یہ جسم میں پروٹین کی کمی نہیں ہونے دیتے ۔انڈوں میں شامل پروٹین سے بلڈ پریشر میں کمی آتی ہے اور امراض قلب کا خطرہ بھی کم ہو جاتاہے۔

اخروٹ

اومیگا تھری فیٹی ایسڈ اور وٹامن ای سے بھر پور یہ خشک میوہ بالوں میں نمی بر قرارر کھنے میں مدد گار ہے،اخروٹ میں کاپر کی مقدار بھی کافی ہوتی ہے جو جلد اور بالوں کے قدرتی رنگ کو بر قراررکھنے میں مدد دیتاہے۔اس منرل کی کمی بالوں کو قبل ازوقت سفید کر سکتی ہے۔

خربوزے

خربوزوں میں بھی بیٹا کروٹین اور وٹامن اے پائے جاتے ہیں جو نہ صرف سر کے جلدی خلیات کی نشوونما کو کنٹرول کرتے ہیں بلکہ جلدکی اوپری تہہ کی چمک بھی بڑھاتے ہیں۔

زیتون کا تیل

زیتون کا تیل عمر بڑھنے کے ساتھ لاحق ہونے والی کئی بیماریوں کی روک تھام میں مدد گار ہے۔اس کا استعمال بلڈ پریشر کو کم کرتاہے ،امراض قلب کا خطرہ کم کرتاہے ،میٹا بولک سینڈروم کی روک تھام کرتاہے یعنی ذیابیطس اور خون کی شریانوں کے امراض سے تحفظ دیتاہے۔زیتون کا تیل کینسر کے خلاف تحفظ کے لیے بھی موثر ہے۔زیتون کا تیل جلد کو جوان رکھنے کے لیے بھی فائدہ مند ہے۔

سرخ شملہ مرچ

سرخ مرچ وٹامن سی سے بھرپور ہوتی ہے۔اس میں شامل دیگر اجزاء جسم میں موجود مضر صحت اجزاء کے خلاف مزاحمت کرتے ہیں جس سے بڑھتی عمر کی وجہ سے ہونے والی جسمانی تنزلی کی رفتار میں کمی آتی ہے۔

شہد

شہد قدرتی طور پر جراثیم کش ہوتاہے۔اس میں اینٹی آکسیدنٹس اور متعدد دیگر اجزاء موجود ہوتے ہیں،شہد جلد کے لیے بہت زیادہ فائدہ مند سمجھا جاتاہے۔شہد کو پینا،اسے فیس ماسک کی شکل میں استعمال کیا جائے یا خام حالت میں لگا یاجائے،یہ چہرے کا ورم کم کرنے کے ساتھ ساتھ کیل مہاسوں کا علاج بھی کرتاہے جب کہ خشک جلد کو نمی فراہم کرتاہے۔