کرینہ Kareena Kapoor اور سارہ کی پہلی ملاقات 2001 میں کبھی خوشی کبھی غم کے وقت ہوئی

October 30, 2020

بالی ووڈ کی ادارکارہ سارہ علی خان اپنی سوتیلی والدہ کرینہ کپور سے زندگی میں پہلی بار 2001 میں اس وقت ملی تھی جب کرینہ کی فلم کبھی خوشی کبھی غم کے ٹرائیل چل رہے تھے ۔

کرینہ کپور کا سارہ علی خان سے متعلق اپنے تعلق کا ذکر ایک بھارتی ٹی وی شو کافی ود کرن میں کرتے ہوئے کہنا تھا کہ سارہ علی خان میری بہت بڑی فین تھی اور وہ مجھ سے ملنا چاہتی تھی، وہ مجھ سے ’کبھی خوشی کبھی غم‘ فلم کے ٹرائل کے وقت اپنی والدہ امریتا سنگھ کے ساتھ ملنے کے لیے آئی تھی اور انہوں نے ’یو آر میری سوہنیا‘ والے گانے کا ڈریس پہنا ہوا تھا۔

سارہ خان اس سے پہلے بھی کئی بار اپنے انٹرویوز میں اعتراف کرچکی ہیں کہ وہ کرینہ کپور کی بہت بڑی فین ہیں اور انہیں فلم کبھی خوشی کبھی غم میں کرینہ کا کردار بہت پسند آیا ہے۔

جب کرینہ کپور اور سیف علی خان کی شادی ہوئی تو اس وقت سارہ علی خان صرف 17 سال کی تھیں جبکہ سارہ اور سیف بھی ٹی وی شو کے دوران اس بات کا اعتراف کر چکے ہیں کہ سارہ علی خان کرینہ کپور کو آنٹی کہہ کر بلانا چاہتی ہیں، مگر سیف علی خان نے ان سے التجا کی کہ وہ کرینہ کو آنٹی نہ کہیں۔

سارہ علی خان اب جب 25 سال کی ہوچکی ہیں تو اینکر نے ان سے سوال کیا کہ کیا وہ اب بھی کرینہ کپور کو آنٹی کہہ سکتی ہیں، جس پر سارہ علی خان نے کہا کہ سیف علی خان نے ان سے کہا ہے کہ وہ کرینہ کو چھوٹی ماں کہہ کر پکار سکتی ہیں۔

سارہ علی خان نے کہا کہ اگر میں نے کرینہ کو چھوٹی ماں کہہ کر بلایا تو ان کا نروس بریک ڈاؤن ہوسکتا ہے۔

سارہ علی خان نے کہا کہ میں ہمیشہ اپنے والد سے پوچھتی ہوں کہ کیا میں کرینہ کو آنٹی کہہ سکتی ہوں، جس پر میرے والد مجھے ہمیشہ آنٹی کہنے سے منع کردیتے ہیں۔