آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
ہفتہ 7؍ربیع الثانی 1440ھ 15 ؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پاکستان میں افغانستان کے سفیر عمر زاخیلوال نے کہا ہے کہ انہیں پاکستانی پولیس افسر طاہر داوڑ کے پراسرار قتل پر بہت افسوس ہے۔

عمر زاخیلوال نے مزید کہا ہے کہ انہوں نے طاہر داوڑ کے معاملے پر کابل اور جلال آباد میں رابطہ کیا ہے، طاہر داوڑ کی میت اس وقت جلال آباد میں موجود ہے۔

ایس پی پشاور کی گمشدگی ، بھائی نے مقدمہ درج کرادیا

وفاقی پولیس ایس پی پشاور طاہر خان داوڑ کا سراغ...

انہوں نے مزید کہا کہ ایس پی طاہر داوڑ کی میت کو جلد مکمل احترام کے ساتھ پاکستان کے حوالے کیا جائے گا۔


افغان سفیر نے یہ بھی کہا کہ افغانستان کی حکومت طاہر داوڑ کے افغانستان میں ہونے والے قتل کی مکمل تحقیقات کرے گی۔

واضح رہے کہ ایس پی پشاور طاہر خان داوڑ کو جمعہ 26 اکتوبر کی رات اسلام آباد میں اس وقت اغوا کر لیا گیا تھا جب وہ اپنے گھر سے واک کرنے نکلے تھے۔



اسلام آباد سے اغواء ہونے والے ایس پی رورل پشاور طاہر داوڑ کو پراسرار طور پر افغانستان میں قتل کر دیا گیا، ان کی لاش افغانستان کے علاقے ننگر ہار سے ملی،جس کے ساتھ رکھے گئے خط میں انہیں قتل کرنے کی ذمہ داری طالبان کے ولایت خراسان گروپ نےقبول کی۔

طاہر داوڑ کی لاش کے ساتھ ان کے پرانے عہدے (ڈی ایس پی) کا کارڈ بھی ملا ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں