آپ آف لائن ہیں
بدھ6؍ جمادی الثانی 1442ھ 20؍جنوری 2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

حکومت، ٹی ایل پی مذاکرات کامیاب، فیض آباد دھرنا ختم کرنے پر اتفاق

وفاقی حکومت اور تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے ہیں۔

ذرائع وزارت داخلہ کے مطابق ٹی ایل پی کے سربراہ خادم حسین رضوی کچھ دیر میں دھرنا ختم کرنے کا اعلان کریں گے۔

مذاکرات میں وزارت داخلہ کی حکومتی کمیٹی کی سربراہی وفاقی وزیر مذہبی امور نور الحق قادری نے کی۔

ٹی ایل پی نے گستاخانہ خاکوں کے خلاف فیض آباد انٹر چینج پر دھرنا دے رکھا تھا، جس پر وزیراعظم عمران خان نے نور الحق قادری کو طلب کرکے انہیں مذاکرات کرنے کی ہدایت کی تھی۔


وفاقی وزیر مذہبی امور وزیراعظم کی ہدایت ملتے ہی لاہور سے اسلام آباد پہنچے اور دھرنے والوں سے مذاکرات کیے۔

اس سے قبل دھرنے کی جگہ پر پولیس کی بھاری نفری تعینات تھی جبکہ اُس کی معاونت کے لیے رینجرز کو بھی اسٹینڈ بائی پر رکھا گیا تھا۔

ضلعی انتظامیہ نے دھرنے کے شرکاء سے مذاکراتی عمل جاری رکھا اور ساتھ ہی اس بات کو یقینی بنایا کہ دھرنے والے دارلحکومت اسلام آباد میں داخل نہ ہوسکیں۔

پولیس نے شمس آباد روڈ پر کنٹینرز لگاکر ٹریفک اور پیدل افراد کا داخلہ بند کردیا۔

دوسری طرف راولپنڈی سے اسلام آباد میں داخل ہونے والے تمام راستوں پر کنٹینرز لگادیے گئے۔

ان انتظامات اور دھرنے کی وجہ سے جڑواں شہروں کے لوگوں کو آمد و رفت میں مشکلات درپیش آئیں۔

قومی خبریں سے مزید