آپ آف لائن ہیں
پیر16؍ رجب المرجب 1442ھ یکم مارچ2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

مریم نواز اسیر چچا سے ملنے عدالت پہنچ گئیں

مسلم لیگ نون کے صدر شہباز شریف سے ملنے نیب عدالت آمد پر گفتگو کے دوران مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ ’چلے تھے نواز شریف کو بدنام کرنے ، گلے پڑ گیا براڈ شیٹ، یہ اتنے کرپٹ ہیں کہ انہوں نے براڈ شیٹ میں بھی کمیشن مانگا ، عمران خان کو شہباز شریف سے خطرہ ہے ، وہ انہیں اپنا متبادل سمجھتے ہیں ۔ جس سے انھیں خطرہ ہوتا ہے اسے جیل میں ڈال دیتے ہیں۔

لاہور کی احتساب عدالت میں مسلم لیگ نون کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائدِ حزبِ اختلاف شہباز شریف اور ان کے صاحبزادے حمزہ شہباز کی فیملی منی لانڈرنگ کیس میں پیشی کے موقع پر سابق وزیرِ اعظم میاں نواز شریف کی صاحبزادی اور مسلم لیگ نون کی نائب صدر مریم نواز اپنے چچا شہباز شریف سے ملنے عدالت پہنچ گئیں۔

مریم نواز شریف کی احتساب عدالت لاہور آمد کے موقع پر وہاں موجود مسلم لیگ نون کے کارکنوں نے انہیں دیکھ کر نعرے بلند کیئے۔

مریم نواز نے اس موقع پر ’جیو نیوز‘ سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ابھی عمران خان کے کچھ حواریوں کے استعفے آئے ہیں، اس سال ان شاء اللّٰہ عمران خان اکیلے رہ جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان اناڑی کھلاڑی ہیں، ان کے مشیروں، وزیروں کو سمجھ آنا شروع ہو گئی ہے، ضمنی انتخابات سے متعلق سرگرم رہنماؤں اور کارکنوں کو ہدایت کر دی ہے۔

نائب صدر نون لیگ نے کہا کہ ان شاء اللّٰہ ضمنی الیکشن ہم جیتیں گے، پی ٹی آئی حکومت بے نقاب ہو چکی ہے۔

مریم نواز کا کہنا ہے کہ لاہور خوبصورت شہر تھا، جسے نااہل حکومت نے کچرے کا ڈھیر بنا دیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ الیکشن کمیشن کے سامنے تمام اپوزیشن پارٹیاں بھرپور احتجاج کریں گی، 31 جنوری کے بعد پی ڈی ایم دھرنے کا حتمی فیصلہ کرے گی۔

مریم نواز کا یہ بھی کہنا ہےکہ براڈ شیٹ کا معاملہ حکومت کے منہ پر طمانچہ ہے، اس حکومت کا جھوٹ انہی کے سامنے آ گیا۔

اس سے قبل احتساب عدالت لاہور کے احاطے میں پولیس اہلکاروں اور نون لیگی عہدے داروں کے درمیان تکرار ہوئی۔

تکرار کا واقعہ لاہور کی احتساب عدالت میں مسلم لیگ نون کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائدِ حزبِ اختلاف شہباز شریف اور ان کے صاحبزادے حمزہ شہباز کو پہنچانے کے موقع پر پیش آیا۔

مسلم لیگ نون کی رہنما مریم اورنگ زیب، عطاء تارڑ، شائستہ پرویز ملک،عظمیٰ بخاری، غزالی سلیم بٹ اور دیگر رہنما بھی متعدد کارکنوں کے ہمراہ عدالت پہنچے تھے۔


اپنے رہنماؤں شہباز شریف اور حمزہ شہباز کی عدالت آمد پر نون لیگی کارکنوں نے ان کے حق میں نعرے بلند کیئے۔

احاطۂ عدالت میں نون لیگی عہدے داروں عظمیٰ بخاری، غزالی سلیم بٹ اور دیگر کی پولیس اہلکاروں سے تکرار بھی ہوئی۔

عظمیٰ بخاری نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ آج کورٹ روم کے اندر جیمر لگائے جا رہے ہیں، گاڑی اندر لگانے کی اجازت نہیں دے رہے، آج ایسا لگ رہا ہے جیسے کوئی نئے شہباز شریف عدالت آئے ہیں۔

لاہور کی احتساب عدالت میں شہباز شریف فیملی کے خلاف کیس کی سماعت جج جواد الحسن کر رہے ہیں۔

عدالت شہباز شریف کی اہلیہ نصرت شہباز، رابعہ عمران، سلمان شہباز سمیت 6 ملزمان کو اشتہاری قرار دے چکی ہے۔

قومی خبریں سے مزید