آپ آف لائن ہیں
جمعہ20؍ رجب المرجب 1442ھ 5؍مارچ2021ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کتے سونگھ کر بتائیں گےکس شخص کوکورونا ہے

برسلز( حافظ انیب راشد ) بلجیم میں اب کتے سونگھ کر بتا سکیں گے کہ کون شخص کورونامثبت ہے، یہ اطلاع بلجین میڈیا کے ذریعے سامنے آئی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ ملک میں کتوں کی ٹریننگ کا ایک پروگرام جاری ہے جس کے بعد تربیت پانے والے کتے صرف سونگھ کر یہ بتانے کے قابل ہوجائیں گے کہ کون شخص کورونا وائرس سے متاثر ہے اور کون نہیں ۔ تجویز کے خالق جلد کی مائیکرو بیالوجی کے ایک ماہر ڈاکٹر کرس کالورٹ ( جو اب اس پراجیکٹ کے سربراہ بھی ہیں ) نے گذشتہ سال اگست میں یہ آئیڈیا پیش کیا تھا، ان کی تجویز میں جسم سے نکلنے والے پسینے کی بو کو پیش نظررکھتے ہوئے یہ خیال ظاہر کیا گیا تھا کہ اگر ایسے لوگوں کا ایک ڈیٹا بیس یا پروفائل بنا لیا جائے جنہیں کورونا وائرس رہ چکا ہے تو اس کے ذریعے کتوں کو ٹرینڈ کیا جا سکتا ہے ، اس حوالے سے انہوں نے لوگوں سے اپیل کی تھی کہ ایسے لوگ سامنے آئیں جنہیں پہلے کورونا رہ چکا ہو۔ ڈاکٹر کالورٹ کے مطابق کورونا وائرس پسینے میں ایک خاص طرح کی بو پیدا کرتا ہے،ان کے مطابق کورونا وائرس صرف لعاب (Saliva) اور ناک سے نکلنے والی رطوبت کے ذرات سے پھیلتا ہے، یہ جلد یا اس پر موجود پسینے کے ذریعے نہیں پھیلتا، اس لئے یہ سونگھنے والے کتوں کیلئے بھی خطرناک نہیں ۔ ڈاکٹر کالورٹ کی اس تجویز کو جانچنے کے لئے اس پر کام کرنے کا

فیصلہ کیا گیا۔ڈاکٹر کالورٹ کے مطابق یہ تربیت 6 ہفتوں پر مشتمل ہوگی۔ جس کے بعد ان کتوں کو ائرپورٹ اور ہر ایسی جگہ پر آسانی سے استعمال کیا جا سکے گا جہاں مسافروں کی آمدورفت ہو، امید ہے کہ اگلے ماہ میں کسی وقت یہ کتے فائنل ٹیسٹ کے بعد تعیناتی کیلئے تیار ہوں گے ۔

یورپ سے سے مزید