• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

بلوچستان کا بجٹ آج پیش کیا جائے گا۔ نئے بجٹ کا مجموعی حجم 500 ارب روپے سے زائد ہے۔ غیر ترقیاتی مد میں 370 ارب اور ترقیاتی مد میں 140ارب روپے رکھے جانے کا امکان ہے۔

صوبائی بجٹ میں 5 ہزار کے قریب نئی آسامیاں رکھنے اور تنخواہوں میں 10سے 15 فیصد تک اضافے کی تجویز شامل ہے۔

بلوچستان میں تعلیم کیلئے90، صحت کیلئے 40 اور امن و امان کیلئے 60 ارب روپے مختص کئے جانے کا امکان ہے۔

حزب اختلاف کو نظر انداز کرنے پر اپوزیشن جماعتوں کی کال پر کوئٹہ سمیت بلوچستان کی مختلف شاہراہوں پر احتجاج اور دھرنے کے باعث ٹریفک معطل ہوگئی۔

اپوزیشن اراکین اسمبلی کا گِلا ہے کہ بجٹ کے حوالے سے انہیں اعتماد میں نہیں لیا گیا۔

قومی خبریں سے مزید