• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ملک میں چینی و آٹے کی قیمت میں ایک بار پھر اضافہ


ادارہ شماریات پاکستان (پی بی ایس) نے مہنگائی سے متعلق اعداد و شمار جاری کر دیے جس کے مطابق ملک میں چینی اور آٹے کی قیمت میں ایک بار پھر اضافہ ہوگیا۔

پی بی ایس کی جانب سے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق ہفتہ وار بنیادوں پر چینی کی قیمت 1 روپے 55 پیسے فی کلو بڑھ گئی۔

ملک میں چینی کی اوسط قیمت 105 روپے 24 پیسے فی کلو تک پہنچ گئی۔ 

اعداد و شمار میں بتایا گیا کہ 20 کلو آٹے کے تھیلے کی قیمت میں 6 روپے 58 پیسے کا اضافہ ہوا ہے جس کے بعد اس کی قیمت 1134 روپے 58 پیسے ہوگئی ہے۔ 

ادارہ شماریات کے مطابق حالیہ ہفتے ٹماٹر 4 روپے 46 پیسے فی کلو مہنگا ہوا ہے، ایک ہفتے میں ایل پی جی کا گھریلو سلینڈر 172 روپے 11 پیسے مہنگا ہوا ہے۔ 

پی بی ایس کے مطابق گزشتہ ہفتے انڈے 5 روپے 56 پیسے فی درجن مہنگے ہوئے، خوردنی گھی کے ڈھائی کلو کے ڈبے کی قیمت 20 روپے 57 پیسے بڑھی ہے۔ 

ایک ہفتے میں پیاز کی قیمت میں ایک روپے 5 پیسے فی کلو اضافہ ہوا ہے۔ 

ادارہ شماریات کے مطابق حالیہ ہفتے خوردنی تیل کی قیمت میں 20 روپے کا اضافہ ہوا ہے۔

اسی طرح حالیہ ہفتے لہسن ایک روپے 46 پیسے فی کلو مہنگا ہوا، مٹن کی قیمت میں ایک ہفتے میں 2 روپے 24 پیسے کا اضافہ ہوا، پٹرول 5 روپے 38 پیسے اور ڈیزل 2 روپے 64 پیسے فی لیٹر مہنگا ہوا ہے۔ 

ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے میں گڑ، چاول، بیف، دال مسور، دودھ ، دہی مہنگا ہوا، جبکہ اسی دوران برائلر چکن 34 روپے 40 پیسے فی کلو سستی ہوئی ہے۔ 

حالیہ ہفتے کیلے ایک روپے 25 پیسے فی درجن سستے ہوئے ہیں، دال مونگ 2 روپے 54 پیسے فی کلوسستی ہوئی، ایک ہفتے میں آلو، دال ماش اور دال چنا کی قیمت بھی کم ہوئی ہے۔ 

ادارہ شماریات کے مطابق حالیہ ہفتے 22 اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

قومی خبریں سے مزید