• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی: PECHS نالے سے غیر قانونی تعمیرات ختم کرانے کا حکم

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری نے کراچی کی انتظامیہ کو پی ای سی ایچ ایس نالے کے اطراف غیر قانونی تعمیرات ختم کرانے کا حکم دے دیا۔

عدالتِ عظمیٰ نے پی ای سی ایچ ایس نالے کے اطراف تجاوزات کے خاتمے سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران حکم دیا کہ پی ای سی ایچ ایس نالے پر دونوں اطراف سے 20، 20 فٹ جگہ خالی کرائی جائے۔

سپریم کورٹ نے حکم دیا کہ پی ای سی ایچ ایس نالے پر جہاں بھی غیر قانونی تعمیرات ہیں فوری ختم کرائیں۔

کے ایم سی کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ پی ای سی ایچ ایس نالے کے اطراف دکانیں بنا دی گئی ہیں، دکانوں کی وجہ سے نالے کی صفائی میں مشکلات کا سامنا ہے۔

سپریم کورٹ نے سوال کیا کہ نالے کے اطراف میں دکانیں کیسے بنا دی گئیں؟

پی ای سی ایچ ایس کے وکیل نے بتایا کہ ہماری طرف سے کوئی غیر قانونی تعمیرات نہیں کی گئیں۔

عدالت نے پی ای سی ایچ ایس کے وکیل سے کہا کہ آپ نے غیر قانونی تعمیرات نہیں کیں تو بات کلیئر ہے، نالے کے اوپر لیز دینا پی ای سی ایچ ایس کا اختیار نہیں۔

متاثرہ شہری نے عدالت کو بتایا کہ اس سوسائٹی میں میرے 2 پلاٹس ہیں۔

سپریم کورٹ نے ریمارکس میں کہا کہ آپ جا کر پی ای سی ایچ ایس والوں سے پلاٹ لیں۔

عدالت نے کے ایم سی کو گرین بیلٹ کو اصل شکل میں بحال کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ گرین بیلٹ سے تمام تجاوزات فوری ختم کرائی جائیں۔

قومی خبریں سے مزید